چین کے خلائی اسٹیشن کے لیے موجود مشن کے ارکان میں شامل خاتون وانگ یاپنگ خلاء میں چہل قدمی کرنے والی پہلی چینی خاتون بن گئی ہیں۔عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق چین کے خلائی پروگرام کے حکام کا کہنا تھا کہ وانگ اور ان کے ایک اور ساتھی خلاباز ژائی ژی گانگ نے اتوار کی شام کو اسٹیشن کے مرکزی ماڈیول سے باہر 6 گھنٹے سے زائد وقت گزارا۔

حکام کے مطابق انہوں نے یہ وقت آلات نصب کرنے اور اسٹیشن کے روبوٹک سروس آرم کے ساتھ ٹیسٹ کرکے گزارا۔ اس دوران عملے کے تیسرے رکن یے گوانگ فو اسٹیشن کے اندر سے معاونت کرتے رہے۔رپورٹ کے مطابق یہ تینوں افراد مستقل اسٹیشن پر موجود دوسرے عملے کا حصہ ہیں جن کے 6 ماہ کے مشن کا آغاز 16 اکتوبر کو ہوا تھا جو اب تک چینی خلا نوردوں کا خلاء میں سب سے زیادہ طویل دورانیہ ہوگا۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔