Waraqu E Taza Online
Nanded Urdu News Portal - ناندیڑ اردو نیوز پورٹل

’مہاراشٹردروہ بی جے پی‘ ٹوئیٹر ٹرینڈ ملک میں اول نمبر پر بحران کے وقت بی جے پی کی گندی سیاست کوعوام نے ٹھکرادیا

IMG_20190630_195052.JPG

ممبئی:جبکہ مہاراشٹرا کورونا کی وباسے مقابلہ کررہا ہے، اقتدار کی لالچ میں بوکھلائی بی جے پی مہاراشٹر کے سیاست کو متزلزل کرنے کی کوشش کررہی ہے۔ لیکن بی جے پی کی اس کوشش کو ریاست کی عوام نے ٹھکراتے ہوئے مہاراشٹر وکاس اگھاڑی کی جانب سے شروع کیا گیا ’مہاراشٹر دروہ بی جے پی‘ نامی ٹوئیٹرٹرینڈر کو ملک میں اول نمبر پہونچادیا ہے۔ اس سے بی جے پی کا مہاراشٹر مخالف چہرہ بے نقاب ہوا ہے۔بی جے پی کی اس معاملے میں ناکامی کا اندازہ اس سے لگایا جاسکتا ہے کہ اسے اپنی لاج بچانے کے لیے بی جے پی اترپردیش وبہار کے ٹرولس اور باٹس کی مدد لینے کی نوبت آگئی۔یہ باتیں آج یہاں مہاراشٹر پردیش کانگریس کمیٹی کے جنرل سکریٹری وترجمان سچن ساونت نے کہی ہیں۔

اس تعلق سے بات کرتے ہوئے سچن ساونت نے کہا کہ مہاراشٹر میں کورونا کے بجائے حکومت کو دشمن سمجھنے والے بی جے پی لیڈران نے مہاراشٹر بچاوکے نام سے تحریک شروع کی ہے ۔ ان کی اس تحریک سے عوام کے ساتھ ہی بی جے پی کارکنان نے بھی کنارہ کشی اختیار کرلی ہے۔مہاراشٹر بی جے پی کی جانب سے حکومت کی کوششوں پر تنقیدیں کی جارہی ہیں۔بی جے پی لیڈران کو یہ بات ہضم ہی نہیں ہورہی ہے کہ حکومت سائنسی طریقہ کار سے کورونا کو ہرانے کی کوشش کررہی ہے۔غالباً وہ یہ سوچتے ہیں کہ تالیاں، تھالیاں بجاکر،دیئے جلاکر ، چھلانگیں وغیرہ لگانے سے کورونا بھاگ جائے گا۔ جبکہ ایسا بالکل نہیں ہے۔

سچن ساونت نے کہا کہ آج صبح سے ہی 1لاکھ 25ہزار سے زائد ٹوئیٹ میں’مہاراشٹر دروہ بی جے پی‘ نامی ہیش ٹیگ کا استعمال کرتے ہوئے کیا گیا۔ ملکی سطح پر آئی ٹی سیل کے کارکنان، پیڈ ٹرولس اور باٹس استعمال کرنے کے باوجود بی جے پی کو انگریزی میں مہاراشٹر بچاوآندولن کو عوام کی جانب سے کوئی تعاون نہیں ملا۔اپنے پیڈ ٹرولس آرمی کی جانب سے مہاراشٹر بچاو ہیش ٹیگ ٹرینڈر کرانے کی کوشش مہاراشٹر دروہ ہی ہے۔ مصیبت کے اس دور میں گھٹیا سیاست کرنے والے بی جے پی کے لیڈران کی اقتدار کی لالچ اس سے بے نقاب ہوئی ہے۔