نائب امیر شریعت سے مثبت اور تعمیری توقعات

مہراج گنج // عالم ربانی حضرت مولانا سید محمد منت اللہ رحمانی کے فرزند ، امیر شریعت بہار ، اڑیسہ ، جھارکھنڈ مولانا سید محمد ولی رحمانی ایک جہاندیدہ اور پرعزم شخصیت کے مالک ہیں۔ طویل ملی و تنظیمی خدمات کے ساتھ جراَت ایمانی اور بے باکی ان کی شناخت ہے۔ ہندوستانی مسلمانوں کا انھیں اعتبار و اعتماد حاصل ہے۔ انہوں نے اپنی غیر معمولی بصارت و بصیرت کا مظاہرہ کرتے ہوئے ایک نوجوان و صالح عالم دین کو امارت شرعیہ کا نائب امیر شریعت نامزد کیا ہے.کم عمری کے باوجود مولانا شمشاد عالم رحمانی استاذ دارالعلوم دیوبند (وقف) کی صلاحیت و صالحیت کی شہرت عام ہے توقع ہے کہ ان کی ذات بابرکت سے امارت شرعیہ بہار کی خدمات کا دائرہ وسیع ہوگا ، نظم و نسق کو استحکام حاصل ہوگا ، معاملات میں شفافیت آئے گی اور اس غیر متوقع انتخاب کو اپنے عمل و کردار سے صحیح ثابت کرنے میں کامیاب ہوں گے۔مذکورہ خیالات کا اظہار میاں صاحب اسلامیہ انٹر کالج گورکھپور کے لکچرر ودارالعلوم فیض محمدی ہتھیا گڈھ کے رکن شوریٰ مولانا طار ق شفیق ندوی نے کیا۔