MPCC Urdu News 7 June 22

ملک کو آزادی دلانے والی کانگریس ماحولیات وانسانیت کے تحفظ کے لیے جان کی بازی لگادے گی: ناناپٹولے

آنے والی نسلوں کے روشن مستقبل کے لیے ماحولیات کے تحفظ کے سوا کوئی چارہ نہیں: بالاصاحب تھورات

انسان تب ہی زندہ رہے گا جب ماحول کو بچایا جائے گا: اشوک چوہان

مہاراشٹر پردیش کانگریس کمیٹی کے محکمہ ماحولیات کی دو روزہ تربیتی کیمپ کا آغاز

ممبئی:ترقی کے منازل طئے کرتے ہوئے ماحولیات کے توازن کا بھی خیال رکھاجاناچاہئے۔ غیر متوازن ترقی انسانیت کے لیے نقصان دہ ہوسکتی ہے۔ ماحولیاتی تبدیلی کسانوں، مزدوروں وغیرہ کو متاثر کر رہی ہے۔ مرکز کی بی جے پی حکومت اپنے کچھ صنعتکار دوستوں کو خوش کرنے کے لیے ماحولیاتی قوانین کی دھجیاں اڑا کر پانی، جنگل اور ماحولیات کو نقصان پہنچا رہی ہے۔ ملک کا آزادی دلانے والی کانگریس ماحولیات وانسانیت کے تحفظ کے لیے جان کی بازی لگادے گی۔ یہ باتیں ریاستی کانگریس کے صدرناناپٹولے نے کہی ہیں۔ وہ ممبئی کے یشونت راوٴ پرتسٹھان میں مہاراشٹرکانگریس کمیٹی کے شعبہ ماحولیات کی جانب سے منعقدہ تبدیل ہوتی ہوئی آب وہوا اوردرجہٴ حرارت میںاضافے کے موضوع پر دو روزہ ماحولیاتی تربیتی کیمپ کے افتتاح کے موقع پر خطاب کررہے تھے۔

اس پروگرام سے نانا پٹولے کے علاوہ قانون ساز کانگریس پارٹی کے لیڈر اور وزیر محصول بالا صاحب تھورات ، تعمیرات عامہ کے وزیر اشوک چوہان، ریاست کے آبی وسائل کے وزیر شنکر راؤ گڈاکھ، آل انڈیا کانگریس کمیٹی کے سکریٹری باجی راؤ کھڈے، مہاراشٹر پردیش کانگریس کے ریاستی نائب صدر موہن جوشی، ایم ایل اے امر راجورکر، جنرل سکریٹری ڈاکٹرگجانن دیسائی، دیپک پارولیکر اور محکمہ ماحولیات کے عہدیداران موجود تھے۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے قانون ساز کانگریس پارٹی کے لیڈر اور وزیرمحصول و بالاصاحب تھورات نے کہا کہ اگر ہم آنے والی نسلوں کو بہتر مستقبل دینا چاہتے ہیں تو ماحولیات کے تحفظ کے سوا کوئی چارہ نہیں ہے۔ گلوبل وارمنگ، کاربن کا اخراج پوری دنیا کو درپیش سب سے بڑے بحرانوں میں سے ایک ہے۔ یہ بہت ہی قابل ستائش ہے کہ کانگریس پارٹی کے محکمہ ماحولیات کے سربراہ سمیر ورتک کی قیادت میں سیاست کے ساتھ ساتھ ماحولیاتی تحفظ کا کام بھی شروع ہوا ہے۔ اس سے سماج کو ایک اچھا پیغام جائے گا کہ کانگریس پارٹی ایک دوسرے پرکیچڑ اچھالنے کے دور میں نہایت مثبت اور بنیادی کام کر رہی ہے۔

اس موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے تعمیرات عامہ کے وزیر اشوک چوہان نے کہا کہ کانگریس پارٹی صرف سیاسی مسائل کے لیے نہیں بلکہ تمام بنی نوع انسان کی فلاح و بہبود کے لیے کام کر رہی ہے۔ گلوبل وارمنگ نے ایک بڑا بحران پیدا کر دیا ہے۔درجہٴ حرارت میں اضافے کی وجہ سے انسانوں ودیگر جانداروں کی اموات میں اضافہ ہورہا ہے ۔ صرف ماحولیات کی آلودگی ہی نہیں بلکہ ملک میں نظریاتی آلودگی بھی بڑھتی جارہی ہے۔

آبی تحفظ کے وزیر شنکر راؤ گڈاکھ نے کہا کہ ماحولیات انسانی زندگی کا سب سے اہم حصہ ہے۔ سیاسی جماعتیں ووٹ حاصل کرنے کے لیے کارکنوں کو تشکیل دینے کے لیے کیمپ لگاتی ہیں لیکن میں کانگریس کے عہدیداروں اور کارکنوں کو مبارکباد پیش کرتا ہوں کہ وہ کانگریس پارٹی کی جانب سے ماحولیاتی تحفظ کے لیے ان تربیتی کیمپوں کا انعقاد کر رہے ہیں۔

اس کیمپ میں محکمہ ماحولیات کے مہاراشٹر بھر سے ریاستی عہدیدار اور ضلعی صدور موجود ہیں۔ اس وقت بین الاقوامی شہرت یافتہ سائنسدان پروفیسر ساگر دھارا اور انڈین انوائرنمنٹل موومنٹ کے ایڈووکیٹ گریش راوٴت نےکیمپ میں شرکا کی رہنمائی کی۔