• 425
    Shares

سراج سولاپوری نے اُردو شاعری کے ذریعے سولاپور کی ایک الگ پہچان بنا ئی ہے.. فاروق سید
سراج سولاپوری کی تخلیقات ناقابل فراموش اور سماج کو سمت دینے والی ہیں : شفیق عابدی
ایک مثالی معاشرے کے بغیر ادب کا تصور نہیں کیا جا سکتا: نویدالحق خان
سراج سولاپوری کے شعری مجموعے "کوئی میرے دل سے پوچھے "کی شاندار رسم اجراء۔۔
سولاپور(نامہ نگار)اُردو لٹریری فورم سولاپور اور ڈاکٹر اسد اللہ خان انگلش میڈیم سکول آرٹس،کامرس اینڈ سائنس جونیئر کالج سولاپور نے مشترکہ طور پر شاعر سراج سولاپوری کے پانچویں مجموعہ کلام "کوئی میرے دل سے پوچھے"کی رسمِ اجراء8 اگست2021 کو صبح 10 بجے خان کیمپس میں معروف ادیب و شاعر بشیرپرواز کی صدارت میں عمل میں آئی۔بال بھارتی، پونے کےاُردو افسر خان نویدالحق انعام الحق کے ہاتھوں کیا گیا۔اپنے خطاب میں انہوں نے کہا کہ اردو ادب کے فروغ اور معاشرے کی ترقی میں سراج سولاپوری نے بہت اہم کردار ادا کیا ہے.
خان کیمپس کے بانی ڈاکٹر اسد اللہ خان نے کہا کہ اردو ادب میں اردو شاعری کی اہمیت سے انکار نہیں کیاجاسکتااور سراج سولاپوری ایک بہت عمدہ شاعر ہیں۔
ایڈووکیٹ عبدالرشید ارشد نے سراج سولاپوری کی شاعری کا تفصیلی جائزہ لیا ۔
بنگلور سے تعلق رکھنے والے اہم شاعر اور عالمی شہرت یافتہ ناظم شفیق عابدی نے سراج سولاپوری کی شخصیت اور زبان کی ترقی میں تخلیق کار کی اہمیت پر تفصیلی روشنی ڈالی ۔
گل بوٹے کے بانی و مدیر فاروق سید نے کہا کہ آج معاشرے میں جو حالات پیدا ہوئے ہیں انہیں صالح ادب کے ذریعے سمت دی جا سکتی ہے.
نوجوان شاعر آصف اقبال نے کتاب کا تفصیلی جائزہ لیتے ہوئے شاعر موصوف کا مکمل تعارف پیش کیا ۔
اعجاز منظور عالم نے تمہید ی کلمات پیش کرتے ہوئے تمام مہمانوں استقبال کیا۔
سراج سولاپوری نے اپنی تقریر میں کہا کہ میرے شعری سفر میں مختلف شہروں کے مخلص دوستوں سے بہت حوصلہ ملا.میری پانچوں کتابوں کی اشاعت میں عزیز دوست آصف اقبال نے گراں قدر کردار ادا کیا ہے۔
اپنے صدارتی خطاب میں بشیر پرواز نے سولاپور،اردو شاعری اور سراج سولاپوری کی تحریری صلاحیتوں کا بھرپور اعتراف کیا. آپ نے کہا کہ سراج نے بہت ہی کم وقت میں اپنی الگ شناخت بنائی ہے.
پروگرام کی خوبصورت نظامت کے فرائض محمد فہیم باٹگھر نے انجام دیئے اور شکریہ سولا پور یونیورسٹی کے ریسرچ گائیڈ ڈاکٹر غوث احمد شیخ نے ادا کیا اور کہا کہ بہت جلد سراج صاحب کی پانچوں کتابوں پر یونیورسٹی کے ریسرچ اسکالر س کے ذریعے تحقیقی و تنقیدی جائزہ لیا جائے گا.
سعاد اللہ خان،ثاقب سید،آصف اقبال،عباد اللہ خان،ڈاکٹر غوث احمد شیخ،سلطان اختر، آفتاب ملا وغیرہ نے خوب محنت کی۔

Md.Muslim Kabir,
Latur Dist.Correspondent,
Urdu Media
9175978903/9890065959
alkabir786

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔