عید کو بڑی سادگی کے ساتھ منائیں اور غرباء و مساکین کا خاص خیال رکھیں: عبید الرحمن الحسینی

آنند نگر مہراج گنج: اس وقت دنیا کے بیشتر ممالک کورونا وائرس مہاماری کی چپیٹ میں ہے، اس عالمی وبا نے بیشتر ممالک کی بنیادیں ہلا کر رکھ دی ہیں۔ خاص طور پر ہمارے ملک ہندوستان میں اس وبائی مرض سے بہت سے مسائل پیدا ہو گئے ہیں، جن میں خصوصیت کے ساتھ معاشی بدحالی قابلِ ذکر ہے، ہمارے یہاں ایک بڑا طبقہ مزدور پیشہ اور ان غریبوں کا ہے جن کا گزر بسر یومیہ مزدوری پر منحصر ہے۔
مذکورہ باتوں کا اظہار خیال حافظ شجاعت فیض عام چیریٹیبل کے چیف سپروائزر حافظ عبید الرحمن الحسینی نے کی انہوں نے کہا کہ رمضان المبارک کا مقدس مہینہ بڑی تیزی کے ساتھ ہم سے رخصت ہو رہا ہے اور کچھ ہی دنوں میں رب کائنات کا خصوصی انعام و اکرام کا دروازہ بند ہو جائے گا اور عام دنوں کی طرح رحمت و مغفرت کا سلسلہ جاری رہے گا، رمضان المبارک کا آخری عشرہ کی پانچ طاق راتوں میں شب قدر کی تلاش و جستجو کا حکم دیا گیا ہے، شبِ قدر نہایت عظمت و مقبولیت کی مقدس رات ہے، جو ہزار مہینوں سے افضل رات ہے، قابلِ صد مبارک باد ہیں وہ لوگ جنہوں نے اس کے ہر لمحہ کی قدر کی اور اپنا ٹھکانہ جنت میں بنا لیا۔ لہذا اس موقع پر آپ سبھی حضرات سے درد مندانہ اپیل کرتا ہوں کہ اسراف اور فضول خرچی سے خود بھی بچیں اور ہمارے دوسرے بھائیوں کو بھی اس جانب متوجہ کریں، خاص کر امسال عیدالفطر سادگی کے ساتھ منائیں اور موجودہ کپڑوں میں ہی نمازِ عید ادا کریں اور مستقبل کو پیش نظر رکھیں تاکہ عین وقت پر ممکنہ پریشانیوں سے خود بھی بچیں اور دوسروں کو بھی بچائیں