نریندرمودی وبی جے پی نے بنجارہ برادری کے ساتھ دھوکہ کیا ہے: ناناپٹولے

نیشنل بنجارہ ٹائیگرس ایسوسی ایشن کا کانگریس میں انضمام

ممبئی: بی جے پی نے جس طرح مراٹھا ودھنگر برادری کے لوگوں کے ساتھ دھوکہ بازی کی ہے اسی طرح بنجارہ برادری کے ساتھ بھی کی ہے۔ 2014کے انتخاب میں نریندرمودی نے بنجارہ برادری کو اوبی سی کے زمرے میں ریزریشن دینے کا تحریری وعدہ کیا تھا، لیکن دیگر وعدوں کی طرح انہوں نے وہ وعدہ بھی پورا نہیں کیا۔بنجارہ برادری کودھوکہ دیتے ہوئے بی جے پی ومودی نے اس برادری کی توہین کی ہے۔ یہ باتیں آج یہاں مہاراشٹر پردیش کانگریس کمیٹی کے صدرناناپٹولے نے نیشنل بنجارہ ٹائیگرس ایسوسی ایشن کے کانگریس میں انضمام کے موقع پر کہیں۔

کانگریس کے صدر دفتر تلک بھون میں منعقدہ ایک تقریب میں بنجارہ ٹائیگرس ایسوسی ایشن کے قومی صدر آتمارام جادھووکارگزار صدر مدن جادھوکے ساتھ ایسوسی ایشن کے تمام عہدیداران نے کانگریس پارٹی میں شمولیت اختیار کی۔ اس موقع پر ایم ایل اے راجیش راٹھوڑ، ریاستی صدر سنجے راٹھوڑ، کانگریس کے ریاستی ترجمان اتل لونڈھے، ڈاکٹر راجواگھمارے، دیوانندپوار، ڈاکٹر گجانن دیسائی، رام کرشن اوجھا، والمیک پوار، لکشمن راؤ بھورے، این ایس یو آئی کے امیر شیخ وغیرہ موجود تھے۔بنجارہ ٹائیگرس ایسوسی ایشن کے تمام عہدیداران کا کانگریس پارٹی میں استقبال کرتے ہوئے ریاستی صدر نے کہا کہ آنجہانی وسنت راؤ نائیک، سدھاکر راؤ نائیک کا مہاراشٹر کی ترقی میں اہم کردار رہا ہے۔ انہوں نے پاورپروجیکٹ کی تعمیر سے ریاست کو روشنی دیا۔ وسنت راؤ نائیک کی قیادت میں ریاست میں سبزانقلاب آیا۔ بنجارہ برادری نے ریاست کو ایک جہت عطاکی۔ یہ عزتِ نفس اورملک کی مفاد کے لئے جدوجہد کرنے والی برادری ہے۔ پٹولے نے کہا کہ ٹائیگرس کا کوئی مخصوص علاقہ نہیں ہوتا ہے اور پنجہ صرف ٹائیگرس کے ہی پاس ہوتا ہے جو آج کانگریس میں شامل ہوگیا ہے۔

ایم ایل اے راجیش راٹھوڑ اور کانگریس کے نائب صدر سنجئے راٹھوڑ نے بنجارہ ٹائیگرس فورس کے تمام عہدیداران کا کانگریس پارٹی میں استقبال کرتے ہوئے کہا کہ بنجارہ ٹائیگرس فورس کا کانگریس میں انضمام ہونے سے کانگریس کی طاقت مزید بڑھے گی۔ بی جے پی کا اصل چہرہ اب بنجارہ برادری کے سامنے آگیا ہے اور یہ برادری اب بی جے پی کو معاف نہیں کرے گی۔آتمارام جادھو ومدن جادھو نے کہا کہ موجودہ حالات میں صرف کانگریس پارٹی ہی بنجارہ برادری کے ساتھ انصاف کرسکتی ہے، اس لئے ہم نے کانگریس پارٹی میں شمولیت اختیار کی۔ اب ہم کانگریس کی نظریات کی بنیاد پر ریاست بھر میں تحریک چلاتے ہوئے کانگریس پارٹی کو مضبوط کریں گے۔