’وہ فلم ‘یقینا قابل اعتراض ہے: جینت پاٹل

ممبئی: ممبرآف پارلیمنٹ ڈاکٹر امول کولہے نے ’اس فلم‘ میں 2017 میں کام کیا تھا، اس لیے اس کا اس قدر نوٹس لینے اوراسے موضوع بحث بنانے کی ضرورت نہیں۔ این سی پی کے ریاستی صدر اور آبی وسائل کے وزیر جینت پاٹل نے اس معاملے میں پارٹی کے موقف کو واضح کرتے ہوئے کہا کہ’فلم‘ یقینی طور پر قابل اعتراض ہے۔

جینت پاٹل نے یہ بھی کہا کہ جتیندر اوہاڈ نے ناتھورام گوڈسے کی مثبت طور پر پیش کرنے والی کسی بھی فلم کے بارے میں اپنا موقف واضح کردیا ہے۔میں نے یہ فلم یا اس میں ڈاکٹر امول کولہے کے کردار کو نہیں دیکھا ہے۔ امول کولہے نے این سی پی میں شامل ہونے سے پہلے یہ کردار ادا کیا ہے۔ لیکن مجھے نہیں معلوم اس کی نمائش اتنی تاخیر سے کیوں ہورہی ہے۔انہوں نے کہا کہ اس فلم اور اس میں ڈاکٹرامول کولہے کے ذریعے ادا کئے گئے کردار کے بارے میں اگر کوئی لوگوں کا ردعمل سامنے آرہا ہے تو اس میں کچھ غلط نہیں ہے۔ لیکن بطور فنکار انہوں نے یہ کردار 2017 میں اداکیا ہے۔ بعد میں انہوں نے این سی پی میں شمولیت اختیار کی اور لوک سبھا انتخابات میں کامیابی حاصل کی۔ ان کی شناخت چھترپتی شیواجی مہاراج اور چھترپتی سنبھاجی مہاراج کا کردار ادا کرنے سے ہے۔ جینت پاٹل نے یہ بھی کہا کہ انہوں نے لوک سبھا میں شاہو، پھولے اور امبیڈکر کے نظریات سے متاثر ہو کر تقریریں کی ہیں۔جینت پاٹل نے یہ بھی کہا کہ ’وہ فلم‘ دیکھنے اور اس کو دیکھنے میں وقت برباد کرنے کی قطعی ضرورت نہیں ہے اور ہمارے موقف کا اظہار جتیندر اوہاڈ نے کردیا ہے۔

رائے گڑھ ضلع کے ارن، کھارگھراور الوے کے مختلف پارٹیوں کے لیڈران این سی پی میں شامل

ممبئی: این سی پی کے قومی جنرل سکریٹری اور ایم پی سنیل تٹکرے کی موجودگی میں، مختلف پارٹیوں کے قائدین، سماجی کارکنان اور مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے اہم لوگوں نے آج ریاستی دفتر میں این سی پی میں شمولیت اختیار کی۔ان میں کھارگھر کے ڈاکٹر وجئے کمار چوہان (رویا کالج کے پروفیسر)، ایچ پی سی ایل کے جنرل منیجر دولت ایچ کاٹکر، سیشن عدالت کے ریٹائرڈ جج سنتوش کمار جیسوال اور بینک، ایل آئی سی، بی آر سی نیز تعلیمی شعبوں کے کئی ریٹائرڈ لوگ شامل تھے۔جبکہ ارن تعلقہ کے ایم این ایس واہتوک سینا رائے گڑھ کے آرگنائزر پرکاش کاشی ناتھ مہاترے، ارن تعلقہ کے شتکری کامگار پکش کے نوگھرڈیویژن کے صدر سنجے تانڈیل، پریتم ٹھاکور، سوشانت ٹھاکور، پنکیش پاٹل وغیرہ سمیت ایم این ایس کے کئی نوجوان کارکنان نے بھی این سی پی میں شمولیت اختیار کی۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے ایم پی سنیل تٹکرے نے کہا کہ این سی پی اس علاقے میں بہت کم وقت میں نمبر ایک پارٹی ہوگی۔آج مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے پڑھے لکھے لوگ پارٹی میں شامل ہو رہے ہیں۔ پارٹی کے قومی صدر شرد پوارصاحب کی قیادت میں یقین رکھتے ہوئے، بہت سے اعلیٰ عہدے داران ونوجوان کارکنان این سی پی سے قربت محسوس کررہے ہیں۔ حالیہ نگر پنچایت انتخابات میں، NCP ضلع رائے گڑھ میں نمبر 1 پارٹی کے طور پر ابھری ہے۔ اس لیے مجھے امید ہے کہ این سی پی رائے گڑھ کے آئندہ میونسپل کارپوریشن انتخابات میں اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرے گی۔اس موقع پر ویمنس کمیشن کی چیئرپرسن روپلیتائی چاکنکر، این سی پی کے ریاستی جنرل سکریٹری پرشانت پاٹل، پنویل کے ضلع صدر ستیش پاٹل، خواتین کانگریس کی ریاستی جنرل سکریٹری محترمہ بھاوناتائی گھانیکر، ریاستی سکریٹری سدام پاٹل، خواتین ضلع صدر نیہا پاٹل وغیرہ موجود تھے۔