وقف کی املاک قوم کی امانت ہیں، اس کا بچانا ہماری اولین ذمہ داری ہے: نواب ملک

ممبئی: بیڑ میں وقف بورڈ کی زمین کو جعلی دستاویزات کے ذریعے اپنے نام پر کرنے والے دو افراد کے خلاف ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔ ان لوگوں نے وقف بورڈ کی 38000مربع فٹ کی زمین پرقبضہ کرلیا تھا جس کے خلاف بیڑ ضلع وقف بورڈ کے آفیسر کے ذریعے بیڑ پولیس میں شکایت کے بعد آئی پی سی کی دفعہ 420،406،468،471،448،120و52کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ وزیراوقاف نواب ملک کی ہدایت پر وقف املاک پر قبضہ کرنے والے یا اس میں کسی بھی قسم کی خردبرد کرنے والوں کے خلاف بیڑ شہر میں یہ تیسری ایف آئی آر ہے۔ اس سے قبل وقف بورڈ کی ایک دیگر زمین کو ہڑپنے کے الزام میں 15؍لوگوں کے خلاف ایف آئی آردرج کی جاچکی ہے۔

تازہ ترین درج ایف آئی آر کے مطابق بیڑ میں سروے نمبر20کی زمین سیدسلیمان صاحب درگاہ سے متعلق ہے جسے خدمت ماش کے طور پربیڑ کے ہی سبھاش روڈ پر رہنے والے حاجی شیخ شجاع الدین ولددادمیاں، شیخ زین الدین ولد شیخ شجاع الدین اور مرزا شفیق بیگ ولد مرزا عثمان بیگ کو 1994میں سالانہ 5ہزار روپئے پر51سال کے لئے کرائے پر دیا گیا تھا۔ حاجی شیخ شجاع الدین کی وفات کے بعد ان کے صاحبزادے شیخ زین الدین نے اس زمین کے جعلی کاغذات واس سے متعلق افسران سے سازباز کرتے ہوئے اپنے اور اپنے بیٹے شیخ نظام کے نام پر کروالیا۔ اس معاملے سے آگاہی کے بعد وقف بورڈ کی جانب سے ان ملزمین کو تاکید کی گئی اور زمین واپس کرنے کے لئے کہا گیا لیکن انہوں نے وہ زمین واپس نہ کرتے ہوئے اس پر تعمیری کام شروع کردیئے۔ بالآخر بیڑ ضلع وقف بورڈ کے آفیسر امین الزماں نے اس کے خلاف پولیس میں شکایت درج کرائی جس پر پولیس نے مذکورہ بالاافرادکے خلاف مقدمہ درج کرتے ہوئے تفتیش شروع کردی ہے۔

اس تعلق سے وقف بورڈ کے وزیر نواب ملک نے کہا ہے کہ جن لوگوں نے بھی وقف کی املا ک میں خرد برد کی ہے، انہیں کسی قیمت پر نہیں بخشا جائے گا۔ ایسے تمام افراد کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی جنہوں نے بھی وقف بورڈ کے کسی املاک یاجائیداد میں کوئی خرد برد کی ہے۔ یہی نہیں بلکہ ان سے وہ املاک واپس بھی لی جائے گی۔نواب ملک نے کہا کہ وقف کی املاک قوم کی امانت ہیں اور اس کی دیکھ بھال کی ذمہ داری محکمہ وقف بورڈ کی ہے۔ ہما را محکمہ کسی صورت یہ برداشت نہیں کرے گا کہ قوم کی اس امانت میں کوئی خیانت ہو۔ ہمارا محکمہ نہایت ایمانداری کے ساتھ کام کررہا ہے اور یہی وجہ ہے کہ محکمہ کے افسران خود آگے بڑھ کر وقف کی املاک پر قبضہ کرنے والوں کے خلاف ایف آئی آر درج کروارہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ وقف کی بہت سی املاک پر لوگوں پر قبضے کی خبریں ہیں، ہم ان تمام سے متعلق معلومات جمع کررہے ہیں۔ اگر کوئی اس میں خرد برد کا ثبوت سامنے آتا ہے تو اس کے خلاف سخت قانونی کارروائی کی جائے۔

suleman darga.pdf

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔ 


اپنی رائے یہاں لکھیں