این سی بی کی جعلسازی کے ہمارے پاس ڈھیروں ثبوت ہیں: نواب ملک

مہاراشٹر میں ہزاروں کروڑ روپئے کی وصولی کا پردہ فاش کئے بغیر چین سے نہیں بیٹھونگا

ممبئی: این سی پی کے قومی ترجمان نواب ملک نے آج ایک بار پھر این سی بی کونشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ ان کے پاس این سی بی کی جعلسازی کے ڈھیروں ثبوت موجود ہیں، این سی بی کے ذریعے لوگوں میں دہشت پیداکرکے ان سے ہزاروں کروڑ روپئے کی وصولی کی جارہی ہے اور میں اس کا پردہ فاش کئے بغیر چین سے نہیں بیٹھونگا۔

انہوں نے این سی بی کے ریجنل ڈائریکٹر سمیروانکھیڈے کا نام لیتے ہوئے کہا کہ وہ لوگوں کے خلاف جھوٹے کیسیس بناتے ہیں۔میرے داماد کے خلاف بھی جھوٹا کیس بنایا گیا لیکن جب معاملہ عدالت پہونچا تو جو الزامات میرے داماد پر عائد کئے گئے تھے وہ ثابت ہیں ہوسکے جس کی بناء پر عدالت نے ضمانت دیدی۔ انہوں نے کہا کہ این سی بی کے ذریعے مہاراشٹر کی مہاوکاس اگھاڑی حکومت کو بدنام کرنے کی سازش رچی گئی ہے جس میں بی جے پی راست طور پر شامل ہے۔ میرے خلاف ڈھیرسارے ثبوت موجودہیں اور ان کی سازشوں کو بے نقاب کئے بغیر میں چین سے نہیں بیٹھونگا۔ نوا ب ملک نے سمیر وانکھیڈے کو چیلنج کرتے ہوئے کہا کہ جب میں وہ تمام ثبوت عوام کی عدالت میں رکھونگا تو ان کی ملازمت نہیں بچے گی۔ وہ جعلسازی کرتے ہیں کیونکہ وہ خودجعلی ہیں، ان کے والد جعلی تھے اور ان کے گھروالے بھی جعلی ہیں۔ نواب ملک نے کہا کہ قانون سے بالاتر کوئی نہیں ہے، جو بھی قانون توڑے گا، اس کے خلاف کارروائی ہوگی لیکن محض کسی کو بدنام کرنے اوردہشت پیدا کرنے کے لئے اگر کوئی قانون کا سہارا لیتا ہے تو یہ بھی غیرقانونی ہے۔ سچائی یہ ہے کہ این سی بی کے ذریعے ممبئی ومہاراشٹر میں دہشت پیداکرکے ہزاروں کروڑ روپئے کی وصولی کی جارہی ہے اور یہ وصولی مالدیپ اور دبئی میں کی گئی ہے۔ سمیر وانکھیڈے اس کا جواب دیں کہ عین کورونا کے دوران وہ اور ان کے گھروالے دبئی اور مالدیپ میں کیا کررہے تھے۔ واضح ہو کہ نواب ملک نے آج اپنے ٹوئیٹر ہنڈل سے اس تعلق سے کچھ تصویریں بھی پوسٹ کی ہیں جو کافی وائرل ہورہی ہیں۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔