ممبئی: مراٹھا برادری کے ریزرویشن کو منسوخ کیے جانے پر این سی پی کے قومی ترجمان نواب ملک نے بی جے پی پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا ہے بی جے پی وحزبِ مخالف لیڈر دیوندرفڈنویس ریزرویشن قانون کے مخالف ہیں اور ان کی کوشش ہے کہ مراٹھا سماج ریزرویشن سے محروم رہے جس کے لیے وہ دونوں جانب سے کھیلتے ہیں۔ نواب ملک نے یہ باتیں مہاوکاس اگھاڑی حکومت کی جانب سے مشترکہ پریس کانفرنس میں کہیں۔

اس موقع پر انہوں نے بی جے پی ودیوندرفڈنویس پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کا موقف ہے کہ مراٹھابرادری کو ریزرویشن ملے لیکن بی جے پی لیڈر دیوندرفڈنویس اس معاملے میں مسلسل جھوٹ بول رہے ہیں۔ وہ اپنے طور پر عدالت میں وکیل بھیج کر ریاستی حکومت کی عدالتی جدوجہد کو کمزور کرتے ہیں۔ نواب ملک نے کہا کہ سابق وزیرداخلہ انل دیشمکھ کے معاملے میں بھی سابق پولیس کمشنر کو فراہم کیا گیا بی جے پی سے متعلق ہے۔ انہوں نے کہا کہ عدالتی جدوجہد میں فڈنویس کا اہم کردار رہا ہے۔حکومت کا موقف مراٹھا برداری کو ریزرویشن دینا تھا جکہ بی جے پی کا موقف اسے منسوخ کرانا تھا، کیونکہ دیوندرفڈنویس سمیت پوری بی جے پی ریزرویشن قانون کے خلاف ہے۔ نواب ملک نے صاف طور سے کہا کہ دیوندرفڈنویس بار بار کہتے ہیں کہ مہاراشٹر اگھاڑی سرکار مراٹھا سماج کو ریزرویشن نہیں دے سکتی۔ سچائی یہ ہے کہ آج عدالت میں جو وکیل لڑرہے ہیں، ان کی پوری پشت پناہی بی جے پی کررہی ہے اور مراٹھا ریزرویشن کے نام پر مہاراشٹر میں بدامنی پیدا کرنے کی بھی کوشش کررہی ہے۔

ناگپور حج ہاؤس میں کوویڈ سیٹنر شروع کرنے کا فصیلہ: نواب ملک

ممبئی: ریاستی حکومت کی مہاراشٹر اسٹیٹ حج کمیٹی کے تحت آنے والے ناگپور حج ہاؤس کی عمارت میں کووڈ سینٹر شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ جس کے لیے ناگپور حج ہاؤس کا اختیار ضلعی کلکٹر کو سونپنے کے لیے ہدایت جاری کردی گئی ہے۔ یہ اطلاع آج یہاں اقلیتی امور کے وزیرنواب ملک نے دی ہے۔

وزیرموصوف کے مطابق کوورنا کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے مختلف تدابیر وحکمت عملی اختیار کی جارہی ہیں۔ کورونا کی دوسری لہر میں ناگپور ڈویژن میں بھی مریضوں کی تعداد میں بڑے پیمانے پر اضافہ ہوا ہے۔ محکمہ صحت کے مطابق گزشتہ کل (۴ مئی) ناگپور شہر میں ۲ ہزار689نئے مریضوں کا اندراج ہوا ہے۔ ناگپور شہر میں بڑھتے مریضوں کے علاج کے نقطہئ نظر سے ناگپور حج ہاؤس میں کووڈ سینٹر شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ ناگپور حج ہاؤس کی عمارت ۶ منزلے کی ہے اور عمارت میں 40کمرے ہیں۔ اس کے علاوہ 28 ٹوائلیٹ باتھ روم و ایک کچن ہے۔ یہاں تقریباً 700 لوگوں کی رہائش کا انتظام کیا جاتا ہے۔ عمارت میں جو ضروری کام ہیں انہیں کرنے اور فائرفائنٹگ سسٹم کی سہولت فراہم کرنے کے لیے ناگپور ضلع کلکٹر ہدایت دیدی گئی ہے۔ تمام ضروری سہولیات کی تکمیل کے بعد ضلعی انتظامیہ کی جانب سے اس حج ہاؤس کی عمارت میں کووٹ سینٹر شروع کردیا جائے گا۔