سندیپ سنگھ،بی جے پی، ڈرگ ڈیل کی تفتیش کی جائے: کانگریس

3

کانگریس کی جانب سے دی گئی معلومات سی بی آئی کو سونپی جائے گی: وزیرداخلہ کی یقین دہانی

ممبئی: ریاستی کانگریس کے جنرل سکریٹری وترجمان سچن ساونت نے آج یہاں ریاستی وزیرداخلہ سے مطالبہ کیا ہے کہ سوشانت سنگھ موت معاملے میں سندیپ سنگھ، بی جے پی ڈرگ ڈیل کی تفتیش کی جائے۔ سچن ساونت نے اس ضمن میں ثبوت وشواہدکے ساتھ آج وزیرداخلہ انیل دیشمکھ سے ملاقات کی تھی، جس کے بعد انہوں نے میڈیا کے نمائندوں سے خطاب بھی کیا۔

انہوں نے کہا کہ سوشانت سنگھ راجپوت موت معاملے کے ڈرگ کنکشن میں بی جے پی ملوث ہے۔ ڈرگس ڈیل معاملے میں جس سندیپ سنگھ پر الزام ہے، اس نے سوشانت سنگھ راجپوت کی موت کے بعد کیا بی جے پی کے بڑے لیڈروں سے ملاقات کی؟ اوراگر کی تو اس ملاقات کے درمیان اس نے کیا بات کی، اس کی تفتیش کئے جانے کی ضرورت ہے۔ سندیپ سنگھ نے بی جے پی کے دفتر میں 53بار فون کرکے کس سے بات کی؟ اسے بی جے پی کے کس لیڈر کا تحفظ حاصل ہے؟ نریندرمودی کی بایوپک بنانے اور گجرات حکومت کے ذریعے سندیپ سنگھ کی کمپنی کے ساتھ177کروڑ روپئے کا دوستانہ معاہدہ کیا لین دین کا حصہ تھا؟ بچوں کے ساتھ جنسی استحصال کے جرم میں سندیپ سنگھ کے خلاف ماریشش میں درج مقدمے سے بچانے کے لیے کیا مودی حکومت نے اقدام کیا تھا؟ ان تمام سوالوں کے جواب ملنا ضروری ہے۔ سچن ساونت نے ملاقات کے بعد وزیرداخلہ انیل دیشمکھ نے یقین دہانی کرائی ہے کہ کانگریس پارٹی کی جانب سے تمام ثبوت وشواہد کا مطالعہ اور اس پر غور وخوض کے بعد اسے سی بی آئی کے پاس تفتیش کے لیے سونپا جائے گا۔ انہوں نے کہا ہے کہ کانگریس پارٹی کی جانب سے سوشانت سنگھ معاملے میں ڈرگ کنکشن کا الزام انتہائی سنگین ہے۔

اس موقع پر سچن ساونت نے وزیرداخلہ سے ٹائمز نیوز نیٹ ورک کے مینیجنگ ڈائریکٹر اور سی ای او ایم کے آنند کے خلاف جنسی استحصال کے الزام کی بھی تفتیش کا مطالبہ کیا۔ وزیرداخلہ انیل دیشمکھ کو دیئے گئے مکتوب میں انہوں نے کہا ہے کہ آنند کی کمپنی میں ایک خاتون نے آنند کے خلاف جنسی استحصال کی پولیس میں شکایت درج کرائی ہے۔

لیکن کمپنی نے اس معاملے کو سنجیدگی سے لینے کے بجائے آنندکی پشت پناہی کررہی ہے۔ اس معاملے کی ’وشاکھا‘ ہدایت کے مطابق تفتیش نہیں ہوئی۔ ٹائمز نیوز نیٹ ورک نے مذکورہ خاتون کے الزام کو بے بنیادقرار دیا ہے لیکن اس خاتون کے ساتھ کمپنی کی جانب سے متعصبانہ رویہ اختیار کئے جانے کا شک ہے۔ اس لئے مذکورہ خاتون کی شکایت کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے اس الزام کی تفتیش کئے جانے کی ضرورت ہے۔

وزیرداخلہ سے اس ملاقات کے دروان سچن ساونت کے ساتھ ریاستی خواتین کمیشن کی سابق صدر سوشی بین شاہ، یوتھ کانگریس کے ترجمان آنند سنگھ، یوتھ کانگریس کے جنرل سکریٹری ایڈووکیٹ کرینہ زویر بھی موجود تھیں۔

Letter to Home Minister.pdf

Letter to Home minister Regarding Times Now.pdf