• 425
    Shares

12بولتیدار برادریوں کوانصاف دلایا جائے گا: ناناپٹولے

ممبئی: مہاراشٹر پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر نانا پٹولے نے کہا ہے کہ ریاست میں 12بولتیداروں کے کئی مسائل زیر التوا ہیں جنہیں حل کرنے کے لیے حکومت کے ایوان میں پیش کیا جائے گا اور بولتیداربرادریوں کو انصاف دلایا جائے گا۔وہ گاندھی بھون میں بارہ بولتیدار مہا سنگھ کے اجلاس سے خطاب کر رہے تھے۔

نانا پٹولے نے کہا کہ ہم ہمیشہ عوام کے مسائل حل کرنے کے لیے تیار ہیں اور بارہ بولتیداروں کے مسائل پر پہلے ہی بات چیت ہو چکی ہے۔ ہم آج کئے گئے بہت سے مطالبات کے بارے میں وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے سے پیروی کریں گے اور ان مسائل کو حل کریں گے۔ کانگریس پارٹی نے ہمیشہ سماج کے محروم طبقات کو انصاف دینے کی کوشش کی ہے۔ حال ہی میں نامزد کئے جانے والی مہاراشٹر پردیش کانگریس کی ایگزیکٹو باڈی میں بھی او بی سی کے ساتھ ساتھ بارہ بولتیدار برداریوں کے لوگوں کی نمائندگی دینے کی کوشش کی گئی ہے اور آئندہ بھی ان برادریوں کے لوگوں کو انصاف دینے کی کوشش جاری رہے گی۔انہوں نے کہا کہ جب وہ قانون ساز اسمبلی کے اسپیکر تھے تو انہوں نے او بی سی برداری کی مردم شماری کرانے کا فیصلہ کرتے ہوئے ملک میں ایک مثال قائم کی تھی۔اس کے بعد دیگر ریاستوں نے بھی ایسے ہی مطالبات کیے۔ او بی سی برداری کی مردم شماری سے کئی مسائل کی جڑ تک پہنچاجاسکتا ہے۔ پٹولے نے بارہ بولتیدار برادریوں کے لوگوں سے اپیل کی کہ انتخابات کے موقع پر کچھ سیاسی پارٹیاں انہیں لالچ دینے کی کوشش کریں گی، ایسے لوگوں سے ہوشیار رہنے کی ضرورت ہے۔ اس موقع پر بارہ بولتیدار برادریوں کے لوگوں نے ناناپٹولے کو اپنے مختلف مطالبات پر مبنی میمورنڈم بھی دیا جن میں بارہ بولتیدار اکنامک ڈویلپمنٹ کارپوریشن کا قیام، بارہ بولتیدار،بنجارہ، ایس بی سی اور مسلم او بی سی کے طلباء کے لیے اعلیٰ تعلیم کے لیے 50 فیصد نشستوں کا ریزرویشن،بارہ بولتیداربرادریوں کے ماہر کاریگروں کے کام کو اوسط درجے کا صنعتی درجہ دینے اور انہیں کم شرح سود پر قرض فراہم کرنے جیسے مطالبات شامل تھے۔اس میٹنگ میں بارہ بولتیدار مہا سنگھ کے ریاستی صدر کلیان دلے، چندرپور کے ممبرپارلیمنٹ بالودھانورکر سمیت ریاست بھر سے آئے ہوئے عہدیداران موجود تھے۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔