8نوجوانوں نے طالبہ کی عصمت ریزی کے بعد فحش ویڈیو بنائی

1,625

الور: راجستھان کے الور ضلع کے کشن گڑھباس تھانہ علاقے میں آٹھویں جماعت کی طالبہ کی عصمت ریزی کرنے اور فحش ویڈیو بنا کر نو ماہ تک پیسے بٹورنے کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ملزم 8نوجوانوں نے اسے فحش تصویرہونے کا جھانسہ دے کر بلایا اور پھر زبردستی اس کے کپڑے اتار کر ویڈیو بنا لی۔

بعد میں ملزمین نے متاثرہ سے ویڈیو وائرس کرنے کی دھمکی دے کر تقریباً 50 ہزار روپے لئے۔بعدازاں متاثرہ مزید رقم کا بندوبست نہ کرسکی تو یہ ویڈیو سوشل میڈیا پر ڈال دی گئی۔ جو اس کے گھر والوں تک پہنچ گئی۔

معاملے کے انکشاف پر متاثرہ کے بھائی نے آٹھ نوجوانوں کے خلاف پوکسو ایکٹ اور آئی ٹی ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کرایا ہے۔ پولیس کے مطابق 16 سالہ لڑکی کے بھائی نے رپورٹ میں بتایا کہ گزشتہ اگست تک ان لوگوں نے متاثرہ سے تقریباً 50 ہزار روپے لیے اور دو تین بار اس کی عصمت ریزی کی۔