27 سے کم ہارس پاور کے پاورلوم مالکان کے رجسٹریشن میں ہونے والی دشواریوں پر مہاراشٹراحکومت غور کریگی :وزیر اسلم شیخ

4

ممبئ 30 جون(یو این آئ )مہاراشٹرا کے مالیگاؤں شہر کے سابق رکن اسمبلی آصف شیخ رشید کی قیادت میں مالیگاؤں پاور لوم مالکان کے وفد نے آج وزیر ٹیکسٹائل اسلم شیخ سے ملاقات کی اور 27 ہارس پاور سے کم پاور والے پاور لوم کو بجلی کے نرخوں میں دی جانے والی سرکاری مراعات کے لئے درکار آن لائن و آف لائن اندراج کے عمل کو منسوخ کرنے کا مطالبہ کیا۔


سابق رکن اسمبلی آصف شیخ رشید نے اسلم شیخ کو میمورنڈم دیتے ہوئے کہا کہ مالیگاؤں کو پاورلوم کا شہر کہا جاتا ہے جہاں تقریباً 100 برسوں سے چھوٹے چھوٹے شیڈس میں لوگ 27 ہارس پاور سے کم پاور کے پاور لوم چلا کر اپنا گزر بسر کر رہے ہیں۔ اُنہوں نے کہا کہ مالیگاؤں کی عوام کا اصل ذریعے معاش پاور لوم ہے ایسے میں محکمہ ٹیکسٹائل کی جانب سے گزشتہ سال جاری کردہ احکام کے مطابق 27 ہارس پاور سے کم ( بجلی ) پاور استعمال کرنے والے سبھی پاورلوم کو بجلی کے نرخوں میں سرکار کی جانب سے دی جانے والی مراعات حاصل کرنے کے لئے آن لائن یا آف لائن رجسٹریشن لازمی قرار دیا گیا ہے ایسے میں 27 ہارس پاور سے کم بجلی استعمال کرنے والے پاور لوم مالکان کو رجسٹریشن کے لئے درکار شرائط و ضوابط کے سبب کافی دشواریوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے لہٰذا ہمارا مطالبہ ہے کہ ریاستی حکومت 27 ہارس پاور سے کم بجلی استعمال کرنے والے پاورلوم مالکان کو راحت دینے کا کام کرتے ہوئے آن لائن و آف لائن رجسٹریشن کے عمل کو منسوخ کریں تاکہ 27 ہارس پاور سے کم بجلی استعمال کرنے والے پاور لوم مالکان بجلی کے نرخوں میں حکومت کی جانب سے ملنے والی مراعات حاصل کر سکیں۔


وفد کی باتوں کو بغور سننے کے بعد وزیر ٹیکسٹائل اسلم شیخ نے کہا کہ ریاست مہاراشٹر کے بنکروں کو درپیش مسائل حل کے لئے حکومت سنجیدہ ہے اور اسی ضمن میں ہم نے پاورلوم مالکان کی تنظیموں اور اس شعبے کے ماہرین سے تجاویز طلب کی ہیں جن کو نئی ٹیکسٹائل پالیسیوں میں شامل کیا جائے گا اور جہاں تک 27 ہارس پاور والے پاور لوم مالکان کو رجسٹریشن میں ہونے والی دشواریوں کا معاملہ ہے تو حکومت اس ضمن میں غور کرے گی کہ کس طرح سے رجسٹریشن کے عمل کو آسان بنایا جائے یا اس میں تبدیلی کی جائے جس سے پاورلوم مالکان کی دشواریاں ختم کی جا سکیں۔