ناندیڑ:18نومبر۔(ورق تازہ نیوز)مالیگاوں‘امراوتی اورناندیڑمیں 12نومبر اوراسکے بعد رونما ہوئے ناخوشگوار واقعات کی مذمت میں ناندیڑمیں بی جے پی نے 22نومبر کو ضلع کلکٹرآفس کے روبرو دھرنا آندولن کافیصلہ کیا ہے۔اس طرح کا ایک پیغام سوشل میڈیا پر آج سے گشت کررہا ہے ۔ جس میں کہاگیاہے کہ 22نومبربروز پیر کو صبح گیارہ بجے ضلع کلکٹرآفس ناندیڑ کے روبرو مالیگاوں‘امراوتی اورناندیڑ کے واقعات کی مذمت میں احتجاجی دھرنا دیاجارہا ہے اور پھرضلع کلکٹر کو میمورنڈم پیش کیا جائے گا۔

یاد رہے کہ اس سے قبل مختلف ہندو تنظیموں نے ناندیڑمیں 16نومبر کو قدیم مونڈھاتا کلکٹر آفس تک مورچہ نکالنے کافیصلہ کیاتھا لیکن ضلع انتظامیہ کی درخواست اورسمجھانے کے بعد یہ مورچہ منسوخ کردیاگیاتھا۔لیکن اب پھر ایکبار سوشل میڈیاپر 22نومبر کے دھرنے آندولن کا پیغام وائرل ہورہا ہے جس میں کتنی حقیقت ہے یہ تو فی الحال نہیں معلوم ہے اورکیا ضلع انتظامیہ دھرنا آندولن کیلئے بی جے پی کواجازت دی ہے اسکی بھی فی الحال کوئی اطلاع نہیں ہے ۔

مگر ایک بات واضح نظرآرہی ہے کہ زعفرانی طاقتیں شہر میں کسی نہ کسی طرح ماحول کو خراب کرنے کی کوشش میں مصروف نظر آرہی ہے۔اب ضلع انتظامیہ کی ذمہ داری ہے کہ وہ شہر کے ماحول کو پُرامن بنائے رکھنے کے لئے ہر ممکن کوشش کرے ۔اس طرح کامطالبہ سبھی سماج کے لوگوں کی جانب سے کیاجارہا ہے۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔