نئی دہلی: یومِ جمہوریہ (26 جنوری) کے موقع پر زرعی قوانین کے خلاف کسانوں کی ٹریکٹر پریڈ کے دوران لال قلعہ پر ہونے والے تشدد کے ایک ملزم گینگسٹر لکھبیر سنگھ عرف لکھا سدھانا کی تلاش جاری ہے۔ اس کی گرفتاری پر دہلی پولیس نے ایک لاکھ روپے کا انعام رکھا ہے۔

پنجاب میں بھٹنڈا کے رہائشی لکھا سدھانا کو تلاش کرنے کے لیے ایس آئی ٹی کی ٹیمیں متعدد مقامات پر چھاپے مار رہی ہیں۔ لکھا سدھانا کے خلاف 20 سے زائد فوجداری مقدمات درج ہیں۔ خود کو سماجی کارکن قرار دینے والا لکھا رام پورہ سیٹ سے اسمبلی انتخابات بھی لڑ چکا ہے، تاہم الیکشن میں اس کی ضمانت ضبط ہوگئی تھی۔

این ڈی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق، لکھا سدھانا نے 25 جنوری کو اسٹیج سے تقریر کی تھی کہ نوجوان جہاں سے چاہتے ہیں پریڈ وہیں سے نکلے گی۔ اس پر لال قلعہ پر ہجوم کو اکسانے کا الزام ہے اور وہ خود بھی اس تشدد میں ملوث تھا۔ کچھ دن پہلے اس نے ویڈیو جاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ اس کے دیپ سدھو کے ساتھ چاہے جتنے بھی اختلافات ہوں لیکن ہمیں اس کے ساتھ کھڑا ہونا چاہیے۔ سوشل میڈیا پر اس ویڈیو کو 10 فروری کو اپ لوڈ کیا گیا تھا