• 425
    Shares

پریاگ راج ، 02 اگست (یو این آئی) الہ آباد ہائی کورٹ نے ریاستی حکومت سے دریافت کیا ہے کہ گورکھپور کے بی آر ڈی میڈیکل کالج کے ڈاکٹر کفیل احمد خان کو چار سال سے معطل کیوں رکھا گیا ہے۔

اتنا عرصہ گزر جانے کے بعد بھی محکمانہ کارروائی مکمل کیوں نہیں ہو سکی؟ عدالت نے حکومت سے اس حوالے سے 5 اگست تک جواب طلب کیا ہے۔جسٹس یشونت ورما نے یہ حکم دیا۔درخواست گزار ڈاکٹر خان کا کہنا ہے کہ انہیں 22 اگست 2017 کو اسپتال میں آکسیجن سپلائی کیس کے سلسلے میں معطل کیا گیا تھا۔ اسے معطل کر کے تفتیش کی گئی۔ کارروائی مکمل نہ ہوتے دیکھ کر اس نے ہائی کورٹ میں پٹیشن دائر کی۔ 7 مارچ 2019 کو عدالت نے تین ماہ میں کارروائی مکمل کرنے کی ہدایت دی۔ جس پر 15 اپریل 2019 کو رپورٹ پیش کی گئی ہے۔ اس میں 11 ماہ کے بعد 24 فروری 2020 کو تحقیقاتی رپورٹ کو قبول کرنے کے بعد دو نکات پر دوبارہ جانچ کا حکم دیا گیا۔

درخواست گزار کا کہنا ہے کہ وہ چار سال سے انصاف کے لیے بھٹک رہا ہے۔ اس کے معاملے میں جو بھی فیصلہ کرنا ہے افسر کو فیصلہ کرنا چاہیے۔ لیکن تفتیش کی التوا کے نام پر معاملے کو چار سال تک لٹکانا غیر معقول ہے۔ عدالت نے حکومت سے اس معاملے میں 5 اگست کو جواب طلب کیا ہے۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔