پیرس: یونین آف یورپین فٹ بال ایسوسی ایشنز (یوئیفا) نے یورو کپ 2020 کے دوران کھلاڑیوں کی جانب سے کی جانے والی پریس کانفرنسوں میں اسپانسرڈ مشروبات کی بوتلوں کو ہٹانے کے واقعات پر وارننگ جاری کی ہے یوئیفا نے وارننگ جاری کی ہے کہ پریس کانفرنس کے دوران جس بھی ٹیم کا کھلاڑی اسپانسرز کی جانب سے فراہم کردہ مشروبات کی بوتلیں ہٹائے گا اس کی ٹیم کو بھاری جرمانہ ادا کرنا ہوگا۔

خیال رہے کہ رواں ہفتہ پیر کو میچ سے قبل پریس کانفرنس کے لئے آنے والے پرتگال کے اسٹار فٹبالر کرسٹیانو رونالڈو نے کوکا کولا کی بوتلیں ہٹا کر پانی کی بوتل سامنے رکھ دی تھی جس کے بعد کوکا کولا کے شیئرز کی قیمت گر گئی تھی اور اسے 4 ارب ڈالرز کا نقصان ہوا تھا۔

بعد ازاں اگلے روز مسلم فٹبالر اور فرانس کے مڈفیلڈر پوگبا نے پریس کانفرنس میں اپنے سامنے سے بیئر کی بوتل ہٹائی جبکہ بدھ کو اٹلی کے فٹبالر مینوئل لوکاٹیلی نے بھی کوکا کولا کی بوتلوں کو پانی کی بوتل سے تبدیل کر دیا تھا۔

متواتر ان واقعات کے بعد یوئیفا ایکشن میں آیا اور اس نے ٹیموں کو وارننگ جاری کرتے ہوئے کہا کہ ’’اسپانسرز اور پارٹنرشپس یورپ بھر میں فٹبال کے فروغ اور ٹورنامنٹ کے انعقاد کا اہم جزو ہوتے ہیں‘‘۔

یوئیفا کا کہنا ہے کہ کھلاڑی کنٹریکٹ کے تحت ٹورنامنٹ کے قواعد و ضوابط پر عمل کرنے کے پابند ہیں اور اگر انہوں نے ایسا نہ کیا تو انضباطی کارروائی کی جاسکتی ہے البتہ یوئیفا کی جانب سے کھلاڑیوں پر براہ راست جرمانے نہیں ہوں گے بلکہ ٹیموں کو جرمانہ کیا جائے گا۔