ماہانہ ریڈیو پروگرام ’من کی بات‘ میںوزیر اعظم کا عزم،افواہوں پردھیان نہ دینے کامشورہ

نئی دہلی: وزیر اعظم مودی نے کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے معاملات کے درمیان اتوار کے روز اپنے ماہانہ ریڈیو پروگرام ’من کی بات‘ سے خطاب کیا۔ انہوں نے کہا کہ کورونا کی دوسری لہر نے ملک کو ہلا کر رکھ دیا ہے اور کورونا وائرس ملک کے عوام کے صبر اور تکلیف برداشت کرنے کی حد کا امتحان لے رہا ہے۔ انہوںنے کہا کہ متعدد لوگوں نے اچانک اپنے عزیزوں کو کھو دیا، یہ وقت تازہ دم ہو کر لڑنے کا ہے۔ ریاستی حکومتیں بھی ذمہ داریوں کو نبھانے میں مصروف ہیں۔ پوری طاقت کے ساتھ کورونا کے خلاف جنگ لڑی جا رہی ہے۔ پی ایم مودی نے کہا کہ اپنا بھی خیال رکھیئے اور اپنے خاندان کا بھی خیال رکھیں۔ پی ایم مودی نے اس موقع پر ممبئی کے ڈاکٹر ششانک سے بات کی۔ ڈاکٹر ششانک نے کہا کہ لوگ دیر سے کورونا کا علاج شروع کرتے ہیں۔ فون پر آنے والے ہر طرح کے پیغامات پر یقین کر لیتے ہیں۔ ڈاکٹر ششانک نے کہا کہ علاج معالجے کی بہترین پروٹوکول ہندوستان میں موجود ہے اور لوگ صحت یاب ہو رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کورونا کے میوٹینٹ سے گھبرانے کی ضرورت نہیں ہے۔ کورونا جتنی تیزی سے پھیل رہا ہے لوگ اتنی ہی تیزی سے صحت یاب بھی ہو رہے ہیں۔ پی ایم مودی نے سرینگر کے ڈاکٹر نوید سے بھی بات کی۔ ڈاکٹر نوید نے کورونا کے بارے میں بہت سی اہم معلومات فراہم کیں۔پی ایم مودی نے اس دوران کہا کہ صرف ماہرین کی بات سنیں۔ ڈاکٹروں کے مشورے پر عمل کریں اور ضروری اقدامات اپنائیں۔ انہوں نے کہا کہ ہر کوئی اس ویکسین کی اہمیت کے بارے میں جانتا ہے۔ ویکسین سے متعلق افواہوں کو نظرانداز کریں اور ان پر دھیان نہ دیں۔ تمام اہل افراد ویکسی نیشن سینٹر میں جاکر ٹیکہ لگاوائیں۔


اپنی رائے یہاں لکھیں