نوئیڈا:30مارچ(یواین آئی)اترپردیش کے ضلع نوئیڈا کے سرکاری اسپتال میں کورونا کی ویکسین لگانے کے بعد ایک شخص کی موت ہوگئی۔اس معاملے میں ڈی ایم نے متوفی شخص کا پوسٹ مارٹم کرانے کا حکم دیا ہے حالانکہ ضلع کے چیف میڈیکل افسر نے اس معاملے میں جانچ کے بعد ہی حقائق اجاگر ہونے کی بات کہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج کئی لوگوں کو کورونا ویکسین کاٹیکہ لگایا گیا ہے۔


چیف میڈیکل افسر ڈاکٹر دیپک اوہری نے یہاں جاری بیان میں بتایا کہ آج صبح تقریبا 10:45بجے سیکٹر30سرکاری اسپتال میں نٹھاری گاوں باشندہ ایک شخص ٹیکہ کے لئے آیا تھا۔ وہ شخص انجائنا، ہائپر ٹیشن سے متاثر تھا۔ طے شدہ عمل کے بعد اس شخص کو اپس بھیج دیا گیا تھا لیکن دوپہر بعد کنبے کے لوگ اسے پھر سے اسپتال لے کر آئے۔ جہاں ڈاکٹروں نے اسے مردہ قرار دے دیا۔
انہوں نے کہا کہ لاش کو پوسٹ مارٹم کے لئے ایک ٹیم بنائی گئی ہے پوسٹ مارٹم کے عمل کا ویڈیو گرافی کرائی جائے گی۔ رپورٹ آنے کے بعد ہی موت کی وجوہات ہوپائے گا۔متوفی شخص کا نام سومیا لال یادو بتایا گیا ہے جو مستقل طور سے مدھیہ پردیش کے ستنا کا رہنے والا ہے۔


انہوں نے کہا کہ گوتم بدھ نگر میں 36مراکز پر ٹیکہ کاری کا کام چل رہا ہے جس کے تحت آج تقریبا 2000لوگوں کو کووڈ۔19کا ٹیکہ لگایا گیا ہے۔ مارچ مین تقریبا 73000لوگوں کو کووڈ۔19کا ٹیکہ لگایا جاچکا ہے۔