نئی دہلی : دنیا بھر سے مختلف اقوام ہندوستان کی مدد کیلئے آگے آئی ہیں تاکہ ایشیاء کے اس بڑے ملک میں کورونا وائرس وباء کی دوسری لہر کو مات دی جاسکے۔ گزشتہ چند ہفتوں سے انڈیا میں دوسری لہر نے کافی تباہی مچا رکھی ہے۔ کئی ریاستوں میں کورونا مریضوں کیلئے آکسیجن کی قلت ہوگئی ہے۔ کئی ریاستیں ایسی ہیں جہاں آکسیجن پلانٹس قائم نہیں ، جیسے دہلی جہاں کافی جدوجہد کے بعد منگل کو آکسیجن اکسپریس کے ذریعہ زندگی بخش گیس پہنچائی گئی۔ سرکاری ذرائع کے مطابق امریکہ ، برطانیہ ، فرانس ، سعودی عرب ، آئرلینڈ ، آسٹریلیا ، جرمنی ، سنگا پور ، ہانگ کانگ، یو اے ای ، کویت، تھائی لینڈ اور روس نے ہندوستان کو طبی امداد کی یقین دہانی کراتے ہوئے مختلف ضروری اشیاء بھیجنا شروع کردیئے ہیں۔ سعودی عرب کے شہر دمام سے آکسیجن بھیجی جارہی ہے ۔ برطانیہ 495 آکسیجن کانسنٹریٹرس اور دیگر اشیاء بھیج رہا ہے ، جن میں سے 100 وینٹی لیٹرس منگل کو پہنچ چکے ہیں۔ فرانس بھی دو مرحلوں میں مختلف راحت کاری اشیاء بھیج رہا ہے ۔ ہندوستان کی آرمڈ فورسس ، میڈیکل سرویسز کو جرمنی سے 23 موبائیل آکسیجن جنریشن پلانٹس درآمد کرنے کی ذمہ داری سونپی گئی ہے۔


اپنی رائے یہاں لکھیں