کورونا : ناندیڑ میں بند صدفی صد کامیاب ‘ آج بھی بند‘ شب معراج میں مساجد میں قلیل تعداد میں مصلی‘ گورودوارہ کے تمام گیٹ بند

ناندیڑ:22مارچ(ورق تازہ نیوز) کورونا وائرس کی وباءکوشکست دینے اتوار 22مارچ کو وزیراعظم نریندر مودی کی اپیل پر آج ناندیڑ شہر و ضلع میں صبح سات بجے سے تمام کاروبار‘دوکانیں ‘گاڑے ‘ پانی پٹیاں ‘ہوٹلیں ‘اوردیگر کاروباری ادارے صدفیصد بند رہے ۔ البتہ ضروری کھانے پینے کی اشیا ءدوھ ‘ ترکاری سپلائی ہوتی رہیں ۔ غیر سرکاری دواخانے ‘اورچھوٹے میڈیکل اسٹور بھی بند رہے ۔بند کے دوروان ایس پی اور ضلع کلکٹر اپنے عملے کے ہمراہ شہر کے مختلف علاقوں میں گشت کرتے رہے ۔ پولس کاسخت بندوبست تھا ۔یہاں تک کہ آٹورکشہ ‘ٹیکسی کاریں بھی بند رہیں ۔

شہر کے اہم چوراہوں ا ور شاہراہوں میں عوام کی عدم موجودی سے سناٹا پایاگیا مساجد میں چندافراد کے داخلے کی اجازت تھی ۔ شب معراج النبی کے باعث پولس نے مساجد کے انتظامیہ سے بالمشافہ ملاقات کرکے انھیںہدایت دی کہ وہ 20تا25نمازیوں سے زائد کو مسجد میں داخل نہ ہونے دیں ۔

چنانچہ شہر کی سبھی مساجد میں بہت کم تعداد میں نمازیوں نے نماز پڑھی باقی نے اپنے مکانوں میں نمازیں اوردیگر عبادات انجام دئےے ،امکان ہے کہ بروز پیر23مارچ کو بھی شہر اور ضلع مں تمام کاروبار ہوٹلیں اور دوکانیں بند رہیں گی ۔ویسے محکمہ ریلوے نے آج سے ملک میں چلنے والی سبھی مسافر اور ایکسپریس ٹرینوں کو31مارچ تک بند کردینے کااعلان کیاہے ۔ صرف مال بردار گاڑیاں ہی چلتی رہیں گی ۔ناندیڑریلوے اسٹیشن پر بھی ایکا دُکا مسافردیکھائی دئیے ۔ پلیٹ فارم پرسناٹاچھایا رہا۔ البتہ کچھ بس گاڑیاںچلتی رہیںتاکہ لوگ دوسرے مقامات جانے اور وہاں سے آنے کےلئے سہولت ہو ۔شہر کے مرکزی بس اسٹینڈ پر بھی سناٹارہا ۔ آج رات سے ریاستی حکومت نے یس ٹی بسوں کی آمدورفت پر 31مارچ تک پابندی عائد کردی ہے ۔یاد رہے کہ شہر ناندیڑ میں کورونا مشتبہ مریض پائے گئے تھے جن کاطبی معائنہ کرنے پر رپورٹ منفی آئی تھی اس لئے آج کی تاریخ میں ناندیڑ ضلع میں کورونا کاکوئی مریض موجود نہیں ہے اس کے باوجودضلع انتظامیہ احتیاط کی پوری تدابیر اختیار کررہا ہے۔ کورونا کو روکنے کےلئے مرکزی حکومت اور ریاستی حکومت کی سطح پر بڑے پیمانے پر اقدامات کئے ہیں.

جن میں مذہبی عبادت گاہوں جیسے مندروں ’گورودوارہ ‘گرجاگھروں ‘درگاہوں کوبند کردیاگیا ہے ۔ناندیڑکے گورودوارہ سچکھنڈمیں زائرین کو اندر داخل ہونے کی قطعی اجازت نہیں ہے ۔گزشتہ کل ہفتہ 21 مارچ کو ضلع انتظامیہ نے ناندیڑشہر اور ضلع کی تمام دوکانوں ‘ کاروبار ‘ ہوٹلوں ‘پان پٹیوں اور پھیری والوں کی دوکانوں کو بند کردیاتھا ۔ صرف گوشت ‘ترکاریی ‘دواﺅں او ردودھ کی دوکانیں کھلی تھیں تاکہ شہریان کوکھانے پینے کی اشیاءکی قلت نہ ہو شہر کے دیگلورناکہ ‘ چوپالہ‘ منیارگلی ‘ قدیم گنج ‘برقی چوک ‘محمدعلی روڈ‘قدیم مونڈھا‘سیڈکو‘واگھالہ ‘ شیواجی نگر ‘ورکشاپ کارنر ‘ آئی ٹی آئی ‘مال ٹیکڑی ‘انورادھا پیلس ہوٹل‘ شکتی نگر ‘ پیرنگر ‘ پیربرہان نگر ‘اور شہر کے تمام تجارتی علاقے صد فیصد بند رہے ۔گزشتہ دو دنوںسے بندہونے کے باعث غریب طبقہ کافی متاثر ہوا ہے ۔روزانہ مزدوری کرکے اپنی پیٹ بھرنے غریب لوگ پریشان دیکھائی دےئے ۔اگر یہی صورتحال آئندہ آٹھ ۔دس باقی رہتی ہے تو مزدورطبقہ کو بھوکوں مرنے کی نوبت آسکتی ہے ۔