کورونا سے جنگ جیتنے والے 80 سالہ شخص نے بلیک فنگس کے خوف سے اپنی جان لے

0

کورونا کا خوف تو تھا ہی اور اس خوف نے لوگوں کے ذہنوں میں گھر کر لیا ہے لیکن اب بلیک فنگس کاخوف بہت تیزی کےساتھ بڑھ رہا ہے۔ اس میں لوگوں کواپنی جان جانے کا خطرہ کم ہے لیکن جسم کے کئی اہم حصوں کو متاثر کرنے کا خوف زیادہ ہے۔

بلیک فنگس کے خوف کا ایک معاملہ گجرات سے سامنے آ یا ہے ۔گجرات کے احمد آباد میں کورونا سےصحت مند ہوئے کے بعد ایک 80 سالہ شخص نے میوکرمائکوسس یا بلیک فنگس ہونے کے شبہ میں خودکشی کرلی۔

پولیس نے بتایا کہ پالدی علاقے کے80 سالہ نرنجن شاہ کو لگ بھگ چار ماہ قبل کورونا انفیکشن ہوا تھا۔ اسے ذیابیطس بھی ہے۔ ان کے بیٹے ممبئی میں رہتے ہیں۔

انہیں شبہ ہوگیا کہ انہیں بلیک فنگس ہوگیا ہےاوراسپتال میں اس کا علاج کروانا ممکن نہیں تھا۔ انہوں نے دو دن قبل گھر کی چھت پر جاکر زہر پی لیا اور ان کی موت ہوگئی۔ انہوں نے ایک سوسائڈ نوٹ بھی چھوڑا ہے جس میں انہوں نے اپنی بیماری کے خوف سے یہ قدم اٹھانے کی بات کہی ہے۔