لکھنؤ: کوروناوائرس کی بدترین دوسری لہر نے ملک کے ساتھ ہی اتر پردیش میں بھی ستم خیزی کی نئی داستان لکھ رہی ہے۔ مہاراشٹر کے بعد ملک میں سب سے زیادہ فعال کیسز والی ریاست اتر پردیش ہی ہے، جہاں ہر خاص و عام انفیکشن کا شکار ہوتا نظر آرہاہے۔ یوگی سرکار کی ناقض انتظامیہ کی وجہ سے بھی ریاست میں کوروناکی حالت ابتر ہوئی ہے ،اور اپوزیشن پارٹی لیڈران اس تعلق سے حملہ آور بھی ہیں۔لیکن اس کے با وجود یاست میں اس وقت جو فضابن چکی ہے ، اس سے ایسا محسوس ہوتا ہے کہ جیسے سب کچھ ’بھگوان بھروسے‘ چھوڑ دیا گیا ہے۔ شاید یہی سبب ہے کہ یو پی میں ’جے شری رام‘ لکھے ہوئے ماسک کی ڈیمانڈ میں اچانک زبردست اضافہ ہو گیا ہے۔ امین آباد میں ہول سیل ماسک دکاندار رمیش چندر گپتا نے کہا کہ جے شری رام لکھے ماسک کا مطالبہ کچھ زیادہ ہی بڑھ گیا ہے۔


اپنی رائے یہاں لکھیں