وزیر ریلوے پیوش گوئل نے کل زوردیاہے کہ ہندوستانی ریلوے کی کبھی بھی نجی کاری نہیں ہوگی۔ انہوں نے کہاہے کہ کوئی نہیں کہتا ہے کہ صرف سرکاری گاڑیاں ہی سڑک پر چلیں گی کیونکہ نجی اور سرکاری دونوں گاڑیاں معاشی طور پر بہت اہم ہیں۔نجی سرمایہ کاری کو ریلوے کے کام کو ہموار کرنے کی ترغیب دی جائے گی۔جب کہ کئی اسٹیشن بک چکے ہیں۔ریل کرائے میں بے تحاشہ اضافہ کردیاگیاہے۔جنرل ،اے سی ،سلیپرسبھی جگہ کرائے میں زبردست اضافہ ہواہے۔پلیٹ فارم ٹکٹوں کی قیمت بھی دس گناکے قریب بڑھادی گئی ہے۔لیکن یہ سب ترقی کے نام پرہورہاہے۔ریلوے کے لیے بجٹ کے مطالبہ پر لوک سبھا میں ہونے والی بحث کے جواب میں پیوش گوئل نے کہاہے کہ ہم پر ریلوے کی نجی کاری کا الزام عائد کیا جارہا ہے۔ ملک کی ترقی تب ہوگی جب حکومت اور نجی شعبے مل کر کام کریں گے۔ انہوں نے کہاہے کہ ہندوستانی ریلوے کی کبھی نجی کاری نہیں ہوگی۔ یہ ہر ہندوستانی کی ملکیت ہے اور رہے گی۔


اپنی رائے یہاں لکھیں