• 425
    Shares

سری نگر، 17 اگست (یو این آئی) ایسا لگتا ہے کہ جموں کشمیر میں جنگجو بی جے پی لیڈران و کارکنان کے دشمن بن گئے ہیں۔چاہے پھرا س کارکن یا لیڈر کا تعلق کسی بھی سماج یا طبقہ سے ہو ۔ جنوبی ضلع کولگام کے برازلو کولگام میں منگل کو مشتبہ جنگجوئوں نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے ایک کارکن کو گولیاں مار کر ہلاک کر دیا۔سرکاری ذرائع نے بتایا کہ مشتبہ جنگجوئوں نے برازلو جاگیر میں جاوید احمد ڈار ولد غلام عبداللہ ڈار نامی بی جے پی کارکن پر ان کے گھر کے باہر نزدیک سے گولیاں چلائیں۔

انہوں نے بتایا کہ زخمی جاوید احمد کو فوری طور پر قریبی ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں ڈاکٹروں نے انہیں مردہ قرار دیا۔جموں و کشمیر میں تعینات بی جے پی کے ترجمان الطاف ٹھاکر نے کہا کہ جاوید احمد ڈار بی جے پی حلقہ صدر ہوم شالی بگ تھے۔

انہوں نے اپنے پارٹی کارکن کی ہلاکت کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ جنگجو بے گناہ لوگوں کو نشانہ بنا رہے ہیں۔اس واقعے سے محض چند دن قبل مشتبہ جنگجوئوں نے جنوبی ضلع اننت ناگ میں بی جے پی سرپنچ اور ان کی بیوی، جو پنچ تھیں، کو گولیاں مار کر ہلاک کر دیا تھا۔دریں اثنا سابق وزرائے اعلیٰ عمر عبداللہ اور محبوبہ مفتی نے بی جے پی کارکن کی ہلاکت کی سخت الفاظ میں مذمت کی ہے۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔