کرناٹک: کالج میں چار لڑکوں کا برقعہ پہن کر ڈانس، چاروں طلبا معطل, ویڈیو دیکھیں

2,281

بنگلورو: کرناٹک کے منگلورو شہر میں سینٹ جوزف انجینئرنگ کالج کے طلباء نے ایک تقریب کے دوران بالی ووڈ کے گانوں پر برقع پہن کر ڈانس کیا، جنہیں جمعہ کے روز معطل کر دیا گیا۔ معاملے پر کالج انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ایک پروگرام کے دوران مسلم برادری کے طلباء نے اسٹیج پر دھاوا بول دیا۔ فی الحال اس معاملے کی تحقیقات کے احکامات دیے گئے ہیں۔ یہ بھی کہا جا رہا ہے کہ یہ ڈانس پہلے سے طے شدہ پروگرام کا حصہ نہیں تھا۔

https://twitter.com/path2shah/status/1600855949597888512?ref_src=twsrc%5Etfw%7Ctwcamp%5Etweetembed%7Ctwterm%5E1600855949597888512%7Ctwgr%5Edd9e1f3cdea74aefab2389064b3ddbac15095578%7Ctwcon%5Es1_c10&ref_url=https%3A%2F%2Fwww.qaumiawaz.com%2Fsection%2Fnational
رپورٹ کے مطابق منگلورو کے سینٹ جوزف انجینئرنگ کالج میں اسٹوڈنٹ ایسوسی ایشن کا ایک پروگرام چل رہا تھا۔ اس دوران بالی ووڈ کے گانوں پر ڈانس اور پرفارمنس جاری تھی۔ اچانک برقع پہنے 4 لڑکوں کا ایک گروپ یہاں اسٹیج پر آ دھمکا۔ وہ اچانک دبنگ-2 کے ’فیویکول‘ گانے پر ڈانس کرنا شروع کر دیتے ہیں۔ اس ڈانس کا کلپ سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہے۔

ویڈیو وائرل ہونے کے بعد سینٹ جوزف انجینئرنگ کالج نے ایکشن لیتے ہوئے چاروں طالب علموں کو فی الحال معطل کر دیا ہے۔ کالج انتظامیہ اس بات کی بھی تحقیقات کر رہی ہے کہ یہ واقع کیوں پیش آیا۔

کالج انتظامیہ نے کہا کہ طلباء مسلمان ہیں اور ان کو انکوائری تک معطل کر دیا گیا ہے۔ کالج انتظامیہ نے بعد میں ایک بیان بھی جاری کیا جس میں اعلان کیا گیا کہ ‘کیمپس میں موجود ہر شخص جانتا ہے کہ اس سلسلے میں سخت رہنما خطوط موجود ہیں’۔

کالج نے ٹویٹ کیا، "سوشل میڈیا پر گردش کرنے والے ویڈیو کلپ میں خود مسلم کمیونٹی کے طلباء کے ڈانس کا ایک حصہ پکڑا گیا ہے جو اسٹوڈنٹس ایسوسی ایشن کے افتتاح کے غیر رسمی حصے کے دوران اسٹیج پر اچانک آدھمکے تھے۔”