کامیڈین راجو سریواستو، جم میں دل کا دورہ پڑنے کے ہفتوں بعد چل بسے

1,856
کامیڈین راجو سریواستو کو 10 اگست کو جم میں گرنے کے بعد اسپتال میں داخل کیا گیا تھا اور انہیں ایمس لے جایا گیا تھا۔

نئی دہلی: کامیڈین راجو شریواستو کا جم میں ورزش کے دوران دل کا دورہ پڑنے سے آج ایک ماہ سے زیادہ عرصہ بعد دہلی میں انتقال ہو گیا، ۔ خبر رساں ایجنسی پی ٹی آئی نے ہسپتال کے ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ وہ 58 سال کے تھے۔ راجو سریواستو کو صبح 10.20 بجے مردہ قرار دیا گیا۔

ان کے بھائی دیپو سریواستو نے ایجنسی کو بتایا، "مجھے تقریباً آدھا گھنٹہ پہلے خاندان کی طرف سے فون آیا کہ وہ نہیں رہے، یہ واقعی افسوسناک خبر ہے۔ وہ 40 دنوں سے ہسپتال میں لڑ رہے تھے،” ان کے بھائی دیپو سریواستو نے ایجنسی کو بتایا۔

سریواستو کو 10 اگست کو جم میں گرنے کے بعد اسپتال میں داخل کیا گیا تھا اور انہیں آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز (ایمس) لے جایا گیا تھا۔ اسی دن ان کی انجیو پلاسٹی ہوئی اور انہیں وینٹی لیٹر پر رکھا گیا تھا۔

سریواستو 1980 کی دہائی سے تفریحی صنعت میں سرگرم ہیں لیکن انہیں 2005 میں اسٹینڈ اپ کامیڈی شو "دی گریٹ انڈین لافٹر چیلنج” میں شرکت کے بعد ہی پہچان ملی۔

وہ ہندی فلموں جیسے "میں نے پیار کیا”، "بازیگر”، "بامبے ٹو گوا” اور "آمدانی اتھانی خرچا روپیہ” میں نظر آ چکے ہیں۔ وہ "بگ باس” سیزن تھری کے مقابلہ کرنے والوں میں سے ایک تھے۔

سریواستو نے اپنی موت تک اتر پردیش کی فلم ڈیولپمنٹ کونسل کے چیئرمین کے طور رہے