چین میں دوبارہ کورونا مریضوں کی تعداد میں زبردست اضافہ،حالات سنگین،منی لاک ڈاؤن

1,680

بیجینگ: مختلف خبر رساں اداروں کے مطابق پوری دنیا میں کورونا کی تباہ کاریاں دیکھنے کو مل رہی ہیں۔ مریضوں کی تعداد 64 کروڑ سے تجاوز کر گئی ہے اور مریضوں کی کل تعداد 642,882,084 تک پہنچ گئی ہے۔

کورونا کی وجہ سے 6,625,526 افراد جان کی بازی ہار چکے ہیں۔ دنیا بھر میں 622,095,270 افراد کورونا پر قابو پا چکے ہیں۔ کورونا کے انفیکشن کو روکنے کے لیے تمام ممالک میں کوششیں کی جا رہی ہیں۔ مختلف اقدامات کیے جا رہے ہیں۔

اب تک لاکھوں لوگ کورونا ویکسین لے چکے ہیں۔ چین نے ایک بار پھر پوری دنیا کی کشیدگی بڑھا دی ہے۔ چین میں کورونا کے مریضوں کی بڑھتی ہوئی تعداد کے باعث صورتحال سنگین ہو گئی ہے۔

دارالحکومت بیجنگ میں ایک دن میں پانچ سو سے زائد نئے مریض سامنے آئے ہیں جبکہ ملک بھر میں 25 ہزار سے زائد مریض رپورٹ ہوئے ہیں۔ حکام نے لاکھوں باشندوں کو مشورہ دیا ہے کہ وہ گھر کے اندر ہی رہیں اور اس ہفتے کے آخر تک روزانہ وائرس کا ٹیسٹ کروائیں۔

بیجنگ میں ضلعی ملازمین کو ہفتے کے روز کاروبار کم کرنے اور ویک اینڈ کے دوران غیر ضروری سفر سے گریز کرنے کا مشورہ دیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ، سب سے زیادہ آبادی والے چاؤیانگ ضلع کے ایک اہلکار نے لوگوں کو ہفتے کے آخر میں گھر کے اندر رہنے کو کہا ہے۔ چویانگ بیجنگ کا سب سے زیادہ متاثرہ ضلع ہے۔

تمام اعلیٰ سرکاری دفاتر، کاروباری مراکز اور ہزاروں رہائشی کمیونٹیز وہاں موجود ہیں۔ بیجنگ میٹروپولیٹن علاقہ 18 اضلاع میں تقسیم ہے۔ ان 18 اضلاع کو چار انتظامی علاقوں میں تقسیم کیا گیا ہے۔