پے ٹی ایم استعمال کنندگان کیلئے آر بی آئی کا نیا قانون ‘آپ بھی جان لیں کیا ہے

0 21

ممبئی:5جنوری۔(ایجنسیز)اگر آپ ای والیٹ کا استعمال کرتے ہیں اور آپ کو فراڈ سے ڈر لگتا ہے تو آپ کیلئے یہ خبر راحت بھری ہوسکتی ہے۔ ریزرو بینک آف انڈیا کی نئی گائیڈ لائن کے مطابق اگر کسی صارف کے ساتھ کمپنی کی لاپروائی کی وجہ سے فراڈ ہوتا ہے ، تو اس کے نقصان کی پوری رقم واپس کی جائے گی۔

نئی گائیڈ لائن کے مطابق اگر ای والیٹ یا پری پیڈ انسٹرومنٹ جاری کرنے والی کمپنی کی لاپروائی سے کوئی فراڈ ہوتا ہے تو صارف اس کیلئے ذمہ دار نہیں ہوگا۔ اسی طرح اگر تھرڈ پارٹی ایجنسی کی غلطی کی وجہ سے کسی بھی طرح کا نقصان ہوتا ہے تو بھی صارف کو نقصان کی پوری رقم واپس دی جائے گی۔گائیڈ لائن کے مطابق فراڈ کی جانکاری ملنے کے صارف کو تین دنوں کے اندر اس کی شکایت ای والیٹ کمپنی سے کرنی ہوگی۔ تین دن کے اندر شکایت کرنے پر صارف کو پوری ادائیگی کی جائے گی۔ اگر شکایت چار سے سات دنوں کے اندر کی جاتی ہے ، تو نقصان کی اصلی رقم یا پھر زیادہ سے زیادہ 10 ہزار روپے میں سے جو بھی کم ہوگا وہی دیا جائے گا۔ اگر صارف سات دنوں کے بعد شکایت درج کراتا ہے تو ای والیٹ کمپنی کی اس معاملہ پر جو پالیسی ہوگی ، اسی کے حساب سے ادائیگی کی جائے گی۔ساتھ ہی ساتھ ریزرو بینک نے یہ بھی واضح کردیا ہے کہ اگر صارف کی غلطی سے غلط سودہ ہوجاتا ہے ، تو اس کیلئے تھرڈ پارٹی کی کوئی ذمہ داری نہیں ہوگی اور اس کی پوری ذمہ داری صارف کی ہوگی۔