پیشاب کے بعد منی اور پیشاب کے قطرے آنا

دوستو آج میں آپ لوگوں کو مثانے کی کمزوری کا علاج بتانے والا ہوں جس کی وجہ سے آپ لوگوں کو پیشاب کے ساتھ ساتھ منی اور پیشاب کے قطرے آتے ہیں اور آپ کو مباشرت کے وقت بھی ایسی مشکلات کا سامنا ہوتا ہے جس کی وجہ سے آپ لوگ مثانے کی کمزوری کا شکار ہو جائے ہیں.بے ارادہ پیشاب کا خارج ہونا یا پیشاب کا نکل جانا. اس بیماری میں مثانہ میں پیشاب روکنے کی قوت کمزور پڑ جاتی ہے

اسباب

پیشاب کے بلا ارادہ خارج ہونے کے اسباب میں کمزوری مثانہ یا خراش مثانہ مثانہ کا ڈھیلا ہو جانا جنرل کمزوری یا فالج ہونا ہے بچوں میں پیٹ کے کیڑے ،کانچ نکلنا وغیرہ بھی اسباب ہیں ذیابیطس اور مزاج کا سرد ہونا یا سخت سردی کے موسم میں بھی تکلیف ہوتی ہے ۔

♨️Join Our Whatsapp 🪀 Group For Latest News on WhatsApp 🪀 ➡️Click here to Join♨️

علامات

پیشاب بلا ارادہ قطرہ قطرہ خارج ہوتا رہتا ہے مریض سویا ہوا ہو یا جاگ رہا ہو پیشاب جتنا گردوں سے آتا ہے اتنا ہی خارج ہو جاتا ہے بس مریض کو ایسے محسوس ہوتا ہے کہ اس کے کپڑے بھیگ رہے ہوں ۔

نسخہ خاص

فلفل سیاہ دو گرام , زنجیل 3 گرام ،قسط شیریں ،مصطگی رومی ،فلفل دراز ہر ایک 5 گرام شہد خالص 7 گرام, تل سفید بھون لیں 50 گرام

ترکیب تیاری ۔

تمام ادویات کو نہایت باریک کر کے شہد میں ملا کر معجون بنا لیں ۔

ترکیب استعمال ۔

ایک چمچ صبح اور شام گائے کے دودھ کے ساتھ استعمال کریں ۔

یہ بھی پڑھیں:  How to check E-Challan and pay traffic fine online

دوستو اب میں آپ لوگوں کو پیشاب کے ساتھ منی جو آتی ہے اس کا علاج بتانے والوں ہوں اوپر دیا گیا علاج بے وقت پیشاب کا تھا اور وہ بھی مثانے کی کمزوری کی وجہ سے ہی ہوتا ہے .

پیشاب کے قطروں کا علاج

سونف 3 گرام کھانے کے بعد چبا لیا کریں.

کشتہ قلعی 2 چاول معجون آردخرما 12 گرام ملا کر کھائیں پیشاب کے ساتھ قطرے آتے ہوں تو اس کے لئے بہترین علاج ہے ۔

پیشاب کے قطرے آنے کا اسباب ۔

کشرت احتلام ، قبض و گیس ، بادی اشیاء کا زیادہ استعمال ، مشت زنی ، کثرت مباشرت وغیرہ

پرہیز ۔

جن حضرات کو پیشاب کے ساتھ قطرے آتے ہوں ان کو ان چیزوں سے پرہیز کرنا چائیے. ثقیل اور بادی اشیاء ، گرم اور تلی ہوئی اشیاء اور فحش مواد.

WARAQU-E-TAZA ONLINE

I am Editor of Urdu Daily Waraqu-E-Taza Nanded Maharashtra Having Experience of more than 20 years in journalism and news reporting. You can contact me via e-mail waraquetazadaily@yahoo.co.in or use facebook button to follow me