لاہور(قدرت روزنامہ)” ناموس رسالت جمہوری اتحاد ” بنانے کی تیاریاں شروع، تمام سیاسی اورمذہبی جماعتوں کو اتحاد کاحصہ بنایا جائیگا، رواں ہفتہ میں اسلام آباد میں خصوصی اجلاس طلب کرلیا گیا، مسلم لیگ (ن) پیپلزپارٹی ، جماعت اسلامی ، تحریک انصاف ،ایم کیو ایم، پی ایس پی، جے یو آئی فضل الرحمن، سنی تحریک ،جماعت اہلسنت پاکستان ،پاکستان عوامی تحریک، مسلم لیگ ق ،جے یوپی، سنی اتحاد کونسل، جماعت اہلحدیث پاکستان ، سمیت تمام بڑی اور چھوٹی جماعتوں کو شرکت کیلئے دعوت نامہ ارسال کردیا گیا،

میزبانی پاکستان فلاح پارٹی کریگی ، چیف آرگنائزراور سربراہ پی ایف پی امانت زیب کا شاہ انس نورانی ،سابق وفاقی وزیر مذہبی امور اعجاز الحق ،مفتی منیب الرحمن،ثروت اعجاز قادری، سابق وفاقی وزیر مذہبی حامدسعیدکاظمی،خرم نواز گنڈاپور، حکومتی وفاقی وزیرپارلیمانی امور محمدعلی خان، مسلم لیگ (ن) سے پیرسیدعمران احمد ولی شاہ،ایم این اے ،چوہدری منظورپیپلزپارٹی ،جاویدقصوری،کرسچن لیگ کے جے سالک ودیگرسے رابطہ کیا ہے ، اورملکی سطح پر ختم نبوت اور ناموس رسالت صلی اللہ علیہ وسلم کے تحفظ اور دفاع کیلئے متحدہ پلیٹ فارم بنانے پرضروری مشاورت کی ہے،

انہوں نے کہا کہ سیاسی معاملات سے بالا تر ہوکر” ناموس رسالت جمہوری اتحاد "کاقیام ناگزیر ہے ،تاکہ عوام میں پھیلی بے چینی ختم کی جاسکے، اور بین المذاہب ہم آہنگی کے فروغ کیلئے مشترکہ جدوجہد کی جاسکے،امانت زیب نے بتایا کہ جب ساری جماعتیں اپنے مسائل کیلئے یک جان ہوسکتی ہیں تو ناموس رسالت کیلئے بھی ایک ہونگی ،عاشقان مصطفی ۖ ہرپارٹی اور جماعت میں موجود ہیں اور ہمیں اس ایشو پر سب کو ایک کرنا ہے . ْْْْْْْْْ