دوحہ : قطر میں ہونے والی ڈیفنس نمائش میں پاسداران انقلاب کی جانب سے میزائل کے ماڈلز اور دیگر ہتھیاروں کی نمائش کی گئی جبکہ ایرانی کمانڈر نے اپنے بوتھ میں ملاقاتیں بھی کیں، جہاں ایک بہت بڑا پوسٹر لگایا گیا تھا جس پر ایک کشتی کی تصویر بنی تھی جس میں کمانڈوز بیٹھے تھے۔امریکی وزارت خارجہ کے ترجمان نیڈ پرائس نے جمعرات کو کہا کہ ’ہم میری ٹائم نمائش میں ایران کی موجودگی کو مسترد کرتے ہیں۔ ایران پورے خلیجی خطے میں میری ٹائم کے استحکام کیلئے خطرہ ہے۔‘دوسری جانب قطر کے سرکاری حکام کا کہنا ہیکہ پاسداران انقلاب کو دوحہ میں ہونے والی تین روزہ نمائش کیلئے دعوت نہیں دی گئی تھی۔ترجمان کے مطابق ’ایونٹ میں شرکت اور پویلین کا انتظام ایران کی وزارت خارجہ کی جانب سے کیا گیا تھا جبکہ پاسداران انقلاب کو دعوت نہیں دی گئی تھی۔‘ایونٹ کے دوران ایرانی وفد کے ارکان امریکی بیڑے کے پاس سے گزرے اور اطالوی بکتر بند گاڑی کی تصویریں بنائیں اور ترکش مشین گنوں کا جائزہ بھی لیا۔قطر میں ہونے والی دفاعی نمائش نے اسلحہ ساز بین الاقوامی کمپنیوں کی توجہ حاصل کی ہے اور امید ظاہر کی جا رہی ہے کہ اس سے خلیجی ریاستوں کو فوجی صلاحیتوں کو بڑھانے میں مدد ملے گی۔