مدینہ منورہ میں مسجد نبوی میں وزیراعظم پاکستان شہباز شریف کی قیادت میں وفد کو دیکھ کر چور چور کے نعرے لگائے گئے۔ وزیراعظم اپنے وفد کے ہمراہ تین روزہ سرکاری دورے پر سعودی عرب پہنچ گئے ہیں۔ سوشل میڈیا پلیٹ فارم پر ایک ویڈیو وائرل ہو رہی ہے، جس میں سینکڑوں لوگوں کو "چور چور” کے نعرے لگاتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے ۔

یہ نعرے اس وقت لگائے گئے جب وفد کو مسجد نبوی میں آتے دیکھا گیا۔ بتایا گیا کہ پولیس نے واقعہ کے بعدنعرے لگانے والوں کو گرفتار کر لیا۔ایک ویڈیو میں وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب اور رکن قومی اسمبلی شاہ زین بگٹی کو دیگر کے ساتھ دیکھا گیا۔ ایک پاکستانی اخبار کے مطابق اورنگزیب نے بالواسطہ طور پر معزول عمران خان کو احتجاج کا ذمہ دار ٹھہرایا ہے۔ ایکسپریس ٹریبیون نے اورنگزیب کے حوالے سے کہا، ’’ اس مقدس سرزمین پر اس شخص کا نام لیا جائے گا کیونکہ ہم اس سرزمین کو سیاست کے لیے استعمال نہیں کرنا چاہتے۔ لیکن، انہوں نےپاکستانی معاشرے کو تباہ کر دیا ہے۔

‘‘پاکستان کے وزیر اعظم شہباز شریف سعودی عرب کے اپنے پہلے تین روزہ سرکاری دورے پر ہیں۔ وزیراعظم پاکستان کے دورہ سعودی عرب میں درجنوں حکام اور سیاسی رہنما ان کے ہمراہ ہیں۔ ٹویٹر پر اس واقعہ کے بارے میں ویڈیو شیئر کرتے ہوئے، ایک صارف نے لکھا، "فخر ہے پاکستانیوں پر، براہ کرم ہمارے وزیر اعظم اور پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (PDM) کے مجرموں کے گروہ کا سعودی عرب میں اس قدر شاندار استقبال دیکھ کر خوشی ہوئی”۔