• 425
    Shares

نیشنل ایوارڈ یافتہ پرنسپل ایازالدین شیخ (سر) 40 سالہ مثالی سروس کے بعد سبکدوشالوداعی تقریب میں دانشوران کی شمولیت تھانے (آفتاب شیخ)
تھانے رابوڑی میں مقیم ایازالدین شیخ سر جو نئی ممبئی میونسپل کارپوریشن کی اسکول میں پرنسپل کے عہدہ پر فائز تھے اپنی چالیس سالہ خدمات کے بعد حال ہی میں سبکدوش ہوئے۔ایازالدین شیخ کے سبکدوشی کی تقریب کے دوران نئی ممبئی کے سابق میئر جےونت ستار نے تقریر کرتے ہوئے کہا کہ ایاز سر نے استاد کا رول بہترین طریقے سے نبھایا، مہاراشٹر گورنمنٹ کے قانون کے تحت ایازالدین شیخ سر 58 سال کی عمر میں 40 سالہ مثالی سروس مکمل کر سبکدوش ہو رہے ہیں، لیکن وہ خاموش بیٹھنے والوں میں سے نہیں ہیں، وہ سماجی کام کے ذریعے اپنی قوم و ملت کے لئے اپنی خدمات انجام دیتے رہیں گے وہ ایک مثالی استاد ہونے کے ساتھ ساتھ طلباء کے لئے والدین سے زیادہ محبت کرنے والی شخصیت ثابت ہوۓ ہمیشہ طلباء کے مسائل حل کرنے کے لئے کوشاں رہتے تھے۔ انھوں نے استاد کا رول بخوبی انجام دیا۔ پروگرام میں مہمان خصوصی کے طور پر مولانا حلیم اللہ قاسمی (جنرل سیکرٹری جمعیتہ العلماء مہاراشٹر)، سانپاڑہ نئی ممبیٔ کے سابق کارپوریٹر سومناتھ واسکر، سابق کارپوریٹر کومل تائی واسکر، کارپوریٹر منور پٹیل، غلام شیخ، مقصود ملا، رفیق شیخ, ہردے ناتھ تانڈیل, آتما رام مرکٹے، پدماکر پاٹل، منوہر گھرت، میوا کے جنرل سیکریٹری متین شیخ اور انجمن خاندیش کے صدر سید عباس علی و دیگر شخصیات حاضر تھیں۔ تقریر کے دوران مولانا حلیم اللہ قاسمی صاحب نے کہا کہ جمیعتہ العلماء ہند اپنے ملک کی آزادی کے قبل سے سرگرم عمل ہے ملک کی آزادی میں جمیعتہ العلماء نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا ہمارے اپنے بےشمار تعداد میں شہید ہوئے، گاندھی جی اور چاچا نہرو کے ساتھ کاندھے سے کاندھا ملا کر جمیعتہ العلماء نے آزادی کی خاطر اپنا لہو بہایا ہے اتنا ہی نہیں جمیعتہ العلماء ملک میں آنے والی قدرتی آفات ، فسادات اور دیگر اوقات میں جی جان سے کام کرتی ہے اناج سے لے کر تمام ضروری سامان ضرورت مندوں تک پہنچاتی ہے یہاں تک کہ چھوٹے چھوٹے مکانات کی تعمیر کا ذمہ بھی اٹھاتی ہے، سب سے اہم بات یہ ہے کہ جمیعتہ العلماء ملک کی کسی بھی سیاسی پارٹی کا حصہ نہیں ہے ہمارا واحد مقصد بنا کسی غرض کے ملک و قوم و ملت کی خدمات انجام دینا ہے ہم کسی بھی ذات پات اور دھرم کو نہیں مانتے، ہم صرف انسانیت کے مذہب کو مانتے ہیں ایازالدین شیخ سر ہمارے جمیعتہ العلماء کے تھانے شہر کے جنرل سیکرٹری ہونے کے ناطے اپنی ذمہ داریاں اور خدمات بخوبی انجام دے رہے ہیں ابھی میں کوکن علاقے کے دورے پر ہی نکل رہا ہوں، آخر میں ایازالدین شیخ سر نے کہا کہ اگر ہم دوسروں کے بچوں کا بھلا چاہیں گے تو اللہ ہمارے بچوں کا بھلا کرے گا۔ ہم جو بویں گے وہی کاٹیں گے۔ ایاز سر نے کہا کہ 40 سال کی اس سروس میں جن جن افراد نے ان کا ساتھ دیا ان سبھی افراد کا دل سے شکریہ ادا کرتا ہوں۔ پروگرام کی نظامت میتھیلا بھوسلے نے کی اور پروگرام کو کامیاب بنانے میں اسکول کے پورے اسٹاف کی کافی محنت رہی۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔