جگدل پور: وزیر داخلہ امیت شاہ نے نکسلیوں کے خلاف مہم کو اور تیز کرنے کا عزم دہراتے ہوئے آج کہا کہ اس جنگ میں ہماری جیت طے ہے ۔امیت شاہ نے بائیں بازو کی انتہا پسندی سے متاثرہ علاقوں کے حالات پر آج یہاں تقریباً دو گھنٹے لمبی اعلی سطحٰ میٹنگ کے بعد صحافیوں سے کہا کہ نکسلیوں کے خلاف لڑائی کو اور تیز کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ جوانوں کی شہادت ضائع نہیں جائے گی اور اس لڑائی کو فیصلہ کن موڑ پر پہنچایا جائے گا۔ امیت شاہ نے کہا کہ بیجا پور جیسے بزدلانا واقعہ سے لڑائی نہیں رکے گی بلکہ مزید عزم سے آگے بڑھے گی۔انہوں نے کہا کہ مرکزی اور ریاستی سلامتی دستوں نے نکسلیوں کے خلاف اس علاقے میں زوردار مہم چلائی ہے ،اور مرکز اور ریاستی حکومت نے تمام ترقیاتی کام اس علاقے میں کئے ہیں جس سے نکسلیوں نے بوکھلاہٹ میں اس قسم کی بزدلانا کارروائی کی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اس لڑائی کو انجام تک پہنچایا جائے گااور جنگ میں ہماری جیت طے ہے ۔وزیراعلیٰ بھوپش بگھیل نے اس موقع پر کہا کہ نکسلیوں کے خلاف سکیورٹی فورسز کی کاروائیاں جاری رہیں گی اور یہ آپریشن جاری رکھیں گے ۔ نکسلیوں کے علاقے میں کیمپ لگانے کا کام تیزرفتاری سے کیا جائے گا۔علاقے میں ترقیاتی کاموں میں بھی تیزی لائی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ اس علاقے میں نئے کیمپ لگائے جارہے ہیں ، جس کی وجہ سے نکسلی ناراضگی کا اظہار کررہے ہیں۔ نکسلی محدود دائرے میں سمٹ گئے ہیں۔قبل ازیں وزیر داخلہ امیت شاہ نے آج یہاں بیجا پور ماؤ نوازوں کے حملے میں شہید فوجیوں کو خراج عقیدت پیش کیا۔ امیت شاہ آج ایک بی ایس ایف کے طیارے سے یہاں پہنچے تھے اور وزیر اعلی بھوپش بگھیل کے ساتھ سیدھے پولیس لائن گئے اور شہید فوجیوں کے جسد خاکی پر گل دائرہ چڑھاکر انہیں خراج عقیدت پیش کیا۔ اس موقع پر مرکزی وزارت داخلہ کے سلامتی مشیر وجے کمار کے علاوہ مرکزی دستوں کے اعلی افسر اور چھتیس گڑھ کے ڈائرکٹر جنرل آف پولیس ڈی ایم اوستھی بھی موجودتھے ۔ متعدد شہداء کے اہل خانہ بھی موجود تھے ۔ شہدا کے اعزاز میں دو منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی ، جس کے بعد ان کے جسد خاکی کو ان کے آبائی شہر پہنچایا گیا ، اس موقع پر سیاسی جماعتوں کی ممتاز شخصیات بھی موجود تھیں ۔دو دن قبل سنیچر کے روز بیجا پور میں ہوئے تصادم میں22 جوان شہید ہوگئے تھے جبکہ ایک جوان لاپتہ ہے ۔ اس واقعے میں 31 فوجی زخمی ہوئے ، جو رائے پور اور بیجاپور میں زیر علاج ہیں۔ امیت شاہ اس کے بعد وزیر اعلی مسٹر بگھیل، مرکزی داخلہ سکریٹری، وزارت داخلہ کے سیکیورٹی مشیر ، بستر میں تعینات مرکزی فورسز کے ڈائریکٹر جنرل چھتیس گڑھ کے ڈائرکٹر جنرل آف پولیس ڈی ایم اوستھی اور ماؤ نواز آپریشن کے خصوصی ڈائریکٹر جنرل اشوک جنیجہ سمیت دیگر اعلی عہدیداروں کے ساتھ بائیں بازو کی انتہا پسندی متاثر ہے خطے کی صورتحال کے بارے میں ایک اعلی سطح کا اجلاس منعقد کریں گے ۔ اس ملاقات کے بعد امیت شاہ وزیر اعلی کے ہمراہ ضلع بیجاپور کے گھر نکسل علاقے باسانگوڈا واقع سی آر پی ایف کیمپ جائیں گے اور وہاں سی آر پی ایف اور ریاستی پولیس کے اہلکاروں کے ساتھ لنچ کریں گے ۔


اپنی رائے یہاں لکھیں