ممبئی:(ایجنسی)انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) نے مہاراشٹر حکومت کے وزیر نواب ملک اور ان کے خاندان کے ارکان کے نام کرلا، باندرہ اور سانتا کروز میں واقع مختلف جائیدادوں کی تفصیلات کے سلسلے میں دستاویزات طلب کئے ہیں۔ اے بی پی نیوز پورٹل پر شائع خبر کے مطابق ای ڈی کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر نیرج کمار نے منی لانڈرنگ کی روک تھام ایکٹ 2002 کے تحت نواب ملک کے خلاف جاری تحقیقات کے لیے یہ معلومات مانگی ہے۔

کمار نے یہ خط 24 مارچ کو لکھا ہے، جس میں ان سے تصدیق شدہ دستاویزات اور دیگر ریکارڈ فراہم کرنے کی اپیل کی گئی ہے۔ جن جائیدادوں کی معلومات مانگی گئی ہیں وہ نواب ملک، ان کی اہلیہ اور ان کے بیٹے فراز کے نام بتائی جا رہی ہیں۔ای ڈی نے سانتا کروز ویسٹ میں فلیٹ نمبر 6، اور فلیٹ نمبر 501، باندرہ اور باندرہ ویسٹ کے حوالے سے تفصیلات طلب کی ہیں، جو مبینہ طور پر ملک کے بیٹے فراز کی ملکیت ہیں۔ای ڈی نے کرلا ویسٹ میں نور منزل میں فلیٹ نمبر B-03، C-2، C-12 اور G-8 کے بارے میں بھی معلومات مانگی تھی، جو مبینہ طور پر ملک کی بیوی کے نام پر ہے۔ اس کے علاوہ، ای ڈی نے کرلا مغرب میں نور منزل میں فلیٹ نمبر B-03، C-2، C-12 اور G-8 کے بارے میں تفصیلات طلب کی ہیں، جو مبینہ طور پر نواب ملک کی ملکیت ہیں۔بتادیں کہ نواب ملک کو انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ نے 23 فروری کو مفرور گینگسٹر داؤد ابراہیم اور اس کے ساتھیوں سے متعلق منی لانڈرنگ کی تحقیقات کے سلسلے میں گرفتار کیا تھا۔ اس وقت نواب ملک عدالتی حراست میں ہیں۔