ناندیڑ کے چوپالہ مرکزی اسکول کے لاپرواہی اساتذہ کے خلاف ایجوکیشن آفیسر کاکاروائی کا حکم

916

ناندیڑ: 3ستمبر۔ (ورق تازہ نیوز)ناندیڑ کے چوپالہ مرکزی پرائمری اسکول اور پرشالیس ایجوکیشن آفیسر سویتا برگے نے دورہ کیا اور دیکھا کہ اساتذہ نے وقت پر اسکول مکمل نہیں کیا، طلبہ میں مطلوبہ معیار کی کمی، طلبہ کے امتحانی پرچوں کی لاپرواہی سے جانچ پڑتال، طلبہ کی کم حاضری پائی گئی اسلئے تمام معاملات کی تحقیقات کرنے کاحکم بلاک ایجوکیشن افسران کو دیاہے اور ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کی ہدایت کی گئی ہے۔

طلباءکی حاضری اور اسکول کے معیار کو دیکھنے کے لیے آج 3 ستمبر کو جب پرائمری کی ایجوکیشن آفیسر ڈاکٹر سویتا برگے نے اسکولوں کا دورہ کیا تو اسکول میں اساتذہ ہی موجود نہیں تھے۔ صورتحال یہ دیکھی گئی کہ دو چار طالب علم ہی تھے۔ ایجوکیشن حکام نے خود موجود طلباء کے ساتھ پراتھنا کی اور پھر ٹھیک نو بجے تک اساتذہ بتدریج آتے رہے۔ شہر کے اسکولوں کی اس قابل رحم حالت کو دیکھ کر محکمہ تعلیم کے افسران نے عدم اطمینان کا اظہار کیا۔یہ بھی پتہ چلا ہے کہ سنٹر کے متعلقہ سربراہ نے تعلیمی چیکنگ ٹھیک سے نہیں کی۔مرکزی پرائمری اسکول چوپالہ میں دو سیشن ہوتے ہیں اور اگرچہ پہلا سیشن صبح 7 بجے شروع ہونا تھا لیکن کچھ اساتذہ کو 9 بجے تک اسکول آتے دیکھا گیا۔

اسکول میں ایک صدرمدرس اور ایک ٹیچر کے علاوہ دیگرایک معلم کوچھوڑ کرتمام اساتذہ غیر حاضر رہے۔ شہر کے وسط میں واقع اس ضلع پریشد اسکول کی ایسی تصویر بہت پریشان کن تھی۔ ایجوکیشن آفیسر نے کہاکہ اسکولوں کا دورہ کرنے کے لیے علیحدہ ٹیمیں تشکیل دی جائیں گی اور اس دوران طلبہ کے اندراج، طلبہ کی حاضری اور اسکول کے معیار کو دیکھا جائے گا۔ اس کے علاوہ اساتذہ کے ذریعہ کئے گئے تمام تعلیمی کاموں اور اسکول کو ملنے والی مختلف گرانٹس کا معائنہ کیا جائے گا۔اس موقع پر ضلع پریشد ناندیڑدفتر کے ناظر تعلیمات اورماہور بلاک ایجوکیشن آفیسر سنتوش شیٹکر، متبادل تعلیمی سربراہ ڈی۔ ٹی۔ شرسات ایجوکیشن آفیسر کے ساتھ تھے۔