ناندیڑ:9 اپریل۔(ورق تازہ نیوز)کوویڈ کے مرض میں شدیدمبتلا بیمار مریضوں کی زندگی بچانے میں اہم رول ادا کرنے والے ریم ڈیسیور انجکشن کی دس ہزار خوراکیں ناندیڑ کودستیاب کروائیں اس طرح کامطالبہ ناندیڑحلقہ شمال کے شیوسینا ایم ایل اے بالاجی کلیان کر نے ریاستی وزیر صحت راجیش ٹوپے اورفوڈو ادویات سپلائی کے وزیر راجندرشنگنے سے کیا ہے جسے دونوں وزراءنے فی الفور منظوری دے دی اورمتعلقہ محکمہ کے چیف سیکریٹری و فوڈ اینڈڈرگس انتظامیہ کے کمشنر کوہدایت دی کہ وہ انجکشن فراہمی کا فوراً انتظام کرے ۔

کورونا کی دوسری لہر میں بہت تیزی سے مریض بڑھ رہے ہیںاور ملک کے دس اہم شہروں میںناندیڑ بھی شامل ہوگیا ہے ۔ضلع میںروزانہ 1200سے زائد نئے پازیٹیو مریض اور 25 کے قریب اموات ہورہی ہیں۔ جبکہ کئی مریضوں کی حالت تشویشناک ہے ۔ کورونا سے شدید متاثر مریض کو ریم ڈیسیور انجکشن کی 6 ڈوز دی جارہی ہیں لیکن ضلع میں اسکی قلت پیدا ہوگئی ہے جبکہ کچھ افراد اسکی کالابازاری بھی کررہے ہیں پولس نے کچھ افراد کوبھی گرفتار کیا ہے۔ مرکزی حکومت نے 1400 روپے انجکشن کی قیمت طئے کی تھی مگر مہاراشٹر حکومت نے 900 تک کردی ہے جس پر کلیان کر نے دونوں وزراءکاشکریہ اداکیا ۔ ناندیڑضلع میںانجکشن کی قلت کے باعث مریض فوت ہورہے ہیں اسلئے فی الفور دس ہزار انجکشن کا ذخیرہ فراہم کرنے کامطالبہ کلیانکر نے مذکورہ دونوں وزراءسے کیا ہے ۔جسے فی الفور منظوری دیدی گئی ہے اور اندرون دو یوم دس ہزارانجکشن ناندیڑ پہنچ جائیں گے۔