• 425
    Shares

ناندیڑ:22اگست۔ (ورق تازہ نیوز) حکومت کی سخت شرائط نافذ کئے جانے و ہول مارکینگ عمل کی مذمت میں تمام صرافہ تاجر اور سورنکار کاروباریوںنے کل پیر 23ی¿اگست کوایک روزہ ہڑتال کااعلان کیا ہے۔اس طرح کی اطلاع صرافہ ایسوسی ایشن کے دیپک بودھنے اور سیکریٹری سدھاکر ٹاک نے پریس کانفرنس میں دی ۔کوروناوباءکے باعث پوری طرح سے کاروبار ٹھپ ہے ایسے میں حکومت نے سخت ایچ یوآئی ڈی کاقانون نافذ کردیا ہے جس کے مطابق اسٹاک ڈیکلیریشن دینا لازمی قراردیاگیا ہے ۔

اسکے علاوہ ہال مارکینگ کاعمل بھی کافی تکلیف دہ ہے ۔ جس کانقصان صرافہ تاجروں کے علاوہ گاہکوںکو ہورہا ہے ۔ہال مارک کرتے وقت 18 فیصدجی ایس ٹی ادا کرناپڑرہا ہے اورہال مارک سنٹر میں 10 فیصد رائلٹی اداکی جاتی ہے۔حکومت کے نافذ اس قانون کی خلاف ورزی کرنے پرصرافہ تاجروں کو سزا ‘جرمانہ اورعدالتی کاروائی کاسامنا کرنا پڑسکتا ہے ۔اسلئے یہ سخت شرائط و قوانین کو منسوخ کرنے کامطالبہ صرافہ تاجروںکی جانب سے کیاجارہاہے۔اس پریس کانفرنس میں سدھاکر ٹاک ‘ دیپک بودھنے ‘ کے علاوہ رمیش ڈاگا‘ نول کمار ‘نتین شیوڑکر ‘شیروسنہہ چوہان ‘پانڈورنگ لولگے‘چندرکانت تامٹے اوردیگر صرافہ تاجر موجود تھے۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔