ناندیڑ:گٹکھا ضبطی معاملے میں ملزم کو چاردن کی پولس کسٹڈی

956

ناندیڑ:3نومبر ( ورقِ تازہ نیوز)کل مورخہ 2 نومبر کو فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن نے شہر کے علاقے مرمراگلی میں تین بند دکانوں سے 74 لاکھ 11 ہزار 350 روپے مالیت کا ممنوعہ گٹکا ضبط کیا۔ اس معاملے میں گرفتار ملزمین میں سے ایک کو چیف مجسٹریٹ کیرتی جین دیسارڈا نے چار دن کی پولیس حراست میں بھیج دیا ہے۔

فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن کی ٹیم جب کل دوپہر شہر کے مرمراگلی علاقے میں ایک گلی میں واقع تین شٹروں کو چیک کرنے کے لیے وہاں پہنچی تو انہیں چابیاں نہیں ملی اور وہاں موجود ایک شخص فرار ہو گیااور ایک شخص کو پولیس نے گرفتار کر لیا۔ اس کے بعد جب تین بند دکانوں کو کھول کر جانچ کی گئی تو ان میں سے 74 لاکھ 11 ہزار 350 روپے مالیت کا ریاستی حکومت کی طرف سے ممنوعہ مادہ گٹکا برآمد ہوا۔

فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن آفیسر سنتوش کنکاواڑ کی طرف سے دی گئی شکایت کے مطابق شیخ علیم الدین شیخ قمرالدین (33) رہائشی پربھنی اور اقبال نگر پربھنی کے عظیم الدین (37سال) دونوں کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا تھا۔ ان میں سے عظیم الدین پولیس اور فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن کی گرفت میں نہیں آیا۔ یہ بند دکانیں توکل ٹریڈرزکے نام سے ہیں ۔

اس معاملے میں وزیر آباد پولس اسٹیشن میں مقدمہ نمبر 397/2022 درج کیا گیا۔ اسسٹنٹ پولس انسپکٹر شیوراج جمداڑے نے اس جرم کی جانچ کر رہے ہیں۔ 3 نومبر کو شیوراج جمدادے اور ان کے ساتھی پولیس اہلکاروں نے شیخ علیم الدین شیخ قمرالدین عدالت میں پیش کیا اورپولیس کی تحویل کا مطالبہ کیا گیا، تب جج دیسرڈا نے شیخ علیم الدین کو چار دن یعنی 7 نومبر 2022 تک پولیس حراست میں بھیج دیا ہے۔