ناندیڑ: 10مئی (ورق تازہ نیوز) مدکھیڑ کے قریب وائی علاقہ کے ایک محفوظ جنگل میں دو نیل گائیوں کا شکار کیا گیا ہے، اس معاملے میں تین ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ کل ضبط کیاگیاگوشت نیل گائے کا ہے اور چیتنیہ نگر علاقہ میں ملزم کے گھر میں ڈیپ فریزر میں رکھا گیا تھا۔ شکار کے کیس کے دیگر دو ملزمان فرار ہو گئے ہیں۔

وائی علاقہ میں جنگلاتی مویشیوں کاشکارکرکے انکے گوشت کو ڈیپ فریز میں ذخیرہ کرکے رکھنے کی اطلاع ملنے ےک بعد 8 مئی کوصبح محکمہ جنگلات کے دستے نے چیتنیہ نگر میں محمد فصیح الدین محمدرحیم الدین کے مکان پرچھاپہ مارا۔انکے گھرمیں موجود ڈی فریز میں گوشت پایاگیا۔مگر یہ گوشت ہرن یاکسی دوسرے مویشی کا ہے اسکی شناخت کامسئلہ پیدا ہوگیاتھا۔اسلئے فوریسٹ ڈپارٹمنٹ نے تلاشی مہم شروع کردی اور بھوکرحدو د کے گورٹھا جنگلاتی علاقہ میں وائی گاوں کے بازو ایک جنگل میںدو نیل گائیں شکار کی ہوئی پائی گئیں۔اسلئے ملزمین کو لے کردستہ وائی علاقہ کے جنگل میں پہنچ گیا۔

جہاں پرنیل گائیوں کے ڈھانچے برآمد ہوئے جس سے واضح ہوگیا کہ ناندیڑمیںذخیرہ کرکے رکھاگیاگوشت انہیں گائیوں کاہے ۔دونوں گائیوں پر بندوق سے دو ۔دو گولیاںبھی چلائی گئیں۔ محکمہ جنگلات کے افسران نے پنچنامہ کرکے ملزم محمدفصیح الدین محمدرحیم الدین ساکن چیتنیہ نگرکوگرفتار کرلیا ہے اور دو ملزمین فرار ہے۔ ڈپٹی فوریسٹ آفیسر کیشو باولے کی رہنمائی میں رینجرآفیسر سندیپ شندے ‘فاریسٹ آفیسرموڈون تفتیش کررہے ہیں۔