ناندیڑ:فیسٹول میں محکمہ زراعت کے افسر نے پستول لہرادی ‘معاملہ تفتیش کے دائرے میں

234

ناندیڑ:27ڈسمبر ( ورقِ تازہ نیوز) محکمہ زراعت کے اسپورٹس فیسٹیول میں خوشیاں مناتے ہوئے ڈانس کرتے ہوئے محکمہ زراعت کا ایک افسرجو پستول لہرارہا تھا ا ب وہ تفتیش کے چکر میں پڑ گیا ہے۔ تاہم محکمہ پولیس کی جانب سے اس کا کوئی ریکارڈ موجود نہیں ہے۔ناندیڑ محکمہ زراعت کی جانب سے سالانہ ثقافتی پروگرام کا انعقاد کیا گیا۔

اس کا افتتاح کلکٹر ابھیجیت راوت نے کیا۔ اس تین روزہ ثقافتی پروگرام میں اور اتوار کو مختلف کھیلوں کا انعقاد کیا گیا۔ 24 دسمبر کو، پروگرام کا اختتام کسم آڈیٹوریم میں دھوم دھام کے ساتھ ہوا۔جہاں موسیقی اور رقص کی کئی اقسام تھیں۔ محکمہ زراعت کے سپرنٹنڈنٹ ایگریکلچر روی شنکر چلواڑے اور محکمہ زراعت کے کئی لوگوں کے سامنے بھوکر ایگریکلچر ڈپارٹمنٹ کے افسر کاکڑے نے ہاتھ میں پستول لے کر اسٹیج ڈانس میں حصہ لیا۔ اس حوالے کی تصاویر وائرل ہوگئیں۔

جس کے بعد محکمہ زراعت کا یہ پستول تحقیقاتی دائرے میں آگیا۔ جب اس ریفرنس کی اطلاع پولیس تک پہنچی تو پولیس نے آج اس کی تفتیش کی۔ آج شیواجی نگر پولس نے محکمہ زراعت کے کئی لوگوں کے بیانات قلمبند کئے ہیں۔ لیکن کاکڑے نامی اس افسر کے ہاتھ میں نظر آنے والی پستول پولیس کے سامنے نہیں آئی۔ معتبر ذرائع کے مطابق وہ آج پولیس کے سامنے پیش ہوں گے۔ اس کے بعد کارروائی آگے بڑھے گی۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ وائرل ہونے والی بندوق کے ساتھ تصویر جب بندوق کے کچھ ماہرین کو دکھائی گئی تو اس تصویر سے یہ بتانا ممکن نہیں تھا کہ اس تصویر میں نظر آنے والی بندوق اصلی بندوق ہے۔