ناندیڑ:دوچوروں کی تحویل سے نقدی 17لاکھ روپے ضبط

166

ناندیڑ:2نومبر ( ورقِ تازہ نیوز)شہر کے سمان کنسٹرکشن کے دفتر میں ہونے والی چوری کا معاملہ صرف دو روز میں حل ہو گیا ہے۔ پولیس سپرنٹنڈنٹ سری کرشنا کوکاٹے نے بتایا کہ لوکل کرائم برانچ کی ٹیم نے اس معاملے میں دو چوروں کو گرفتار کیا اور ان سے 22 لاکھ روپے میں سے 17 لاکھ روپے برآمد کئے۔

شہر میں ضلع پریشد کے پاس سمان کنسٹرکشن کے دفتر میں چوری کی واردات 30 اکتوبر کی درمیانی شب نامعلوم چوروں نے انجام دی تھی۔ چوروںنے دفتر سے 22 لاکھ روپے نقدی لوٹ کر لے گئے تھے۔ناندیڑمیں ایس پی کاعہدہ سنبھالنے کے بعدآج سہ پہر اخباری نمائندوںسے بات چیت کرتے ہوئے کہاکہ جیسے ہی یہ کیس درج ہوا، لوکل کرائم برانچ کو تحقیقات کا حکم دیا گیا۔ پولیس انسپکٹر ودارکاداس چکھلیکر کی رہنمائی میں اے پی آئی پانڈورنگ مانے، پیتھاپانی دتاترے کالے اور ملازمین کی ایک ٹیم نے صرف دو دنوں میں اس چوری کو حل کر لیا۔ جائے وقوعہ اور اطراف کی سی سی ٹی وی فوٹیج کی جانچ کی گئی۔

جس کے مطابق چوروں کو کامیابی سے ٹریس کر لیا گیا۔ ٹیم کو موصول اطلاع کے مطابق شیوداس پوربھاجی سونٹکے (عمر 21، ساکن باگمار گلی) اور انکش پانڈورنگ موگلے (عمر 20، ساکن دھنگر گلی) مدکھیڑریلوے اسٹیشن کے علاقے سے گرفتار کیا گیا۔انہوں نے بتایا کہ 22 لاکھ میں سے ان دونوں چوروں سے چوری شدہ 17 لاکھ 41 ہزار 400 روپے برآمد ہوئے۔ناندیڑ ضلع کے بارے میں بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وہ سال 2013 میں 15 دن تک ناندیڑ کے پولیس سپرنٹنڈنٹ کے عہدے پر انچارج رہے ہیں۔یہ تجربہ کارآمد ہوگا۔غیر قانونی کاروبار اکثر شہر میں ایک ہی جگہ پر چلتے ہیں، جس کا مطلب ہے کہ مقامی پولیس اور سماجی کارکن اس کے ساتھ مل کر ہوسکتے ہیں، اس کے لیے ہم مکمل مطالعہ کرنے کے بعد اس بات کو یقینی بنائیں گے کہ غیر قانونی کاروبار نہ ہو۔

شری کرشنا کوکاٹے نے کہا کہ اسی دوران ناندیڑ شہر میں کئی لوگوں کے قبضے سے غیر قانونی بندوقیں ملی ہیں، اس پر کوکاٹے نے کہا کہ یہ اطلاع ہے کہ اتر پردیش، بہار سمیت ریاستوں سے پستول سپلائی کیے جاتے ہیں۔ میں اس پر نظر رکھوں گا۔ بھارت جوڑو یاترا کاناندیڑ ضلع سے گزرنا ناندیڑ ڈسٹرکٹ پولیس فورس کے لیے ایک بہت ہی چیلنجنگ کام ہے۔ شری کرشنا کوکاٹے نے یہ بھی کہا کہ یاترا کے ضمن میں ضلع پولیس فورس کے تقریباً 3 ہزار پولیس افسران اور 400 ملازمین کی منصوبہ بندی کی گئی ہے ۔