ناندیڑ:تاوان کے معاملے میں کانگریس کارپوریٹرکے فرزند اکشے راوت کو دو یوم کی پولس کسٹڈی

17

ناندیڑ:(ورق تازہ نیوز) مالیاتی جرائم برانچ نے 15 لاکھ روپے تاوان مانگنے والے ایک شخص کو گرفتار کیا ہے۔ ملزم کو محترمہ پی۔ ایس۔ جادھو نے 7 جولائی 2022 تک دو دن کی پولیس حراست میں بھیج دیا گیا ہے۔دت نگر علاقہ کے ساکن 62 سالہ سدام کشن راوت نے 28 جون کو درج کرائی گئی شکایت کے مطابق 26 جون 2022 کی شام 7 بجے کے قریب اکشے بھانو سنگھ راوت، راجو بلڈر، اشوک عمریکر، گڈو اور چار سے پانچ دیگر لوگ دت نگر علاقے میں آئے اور 8 نومبر 2021 کو قبضے کو لے گئے دو دوکانوں کا تنازعہ پر بحث کی۔ اس میں راجو بلڈر کا اسٹامپ پیپر تھا۔جس پر تاریخ 13 مارچ 2013 تھی۔ اس کے بعد اس موضوع پر گفتگو ہوئی۔ سدام راوت کو تب بتایا گیا کہ بٹو واٹیا نے ان لوگوں سے شٹر خالی کرنے کے لیے 15 لاکھ روپے دینے کو کہا تھا۔ جب تک 15 لاکھ نہیں ملتے۔ تب تک شٹر کو ہاتھ نہں لگانے دیں گے۔

اس سلسلے میں اکشے راوت کے ماتا گجری کمپلیکس ہنگولی گیٹ کے دفتر میں ایک بار اس معاملے پر بات ہوئی تھی۔ اس کے بعد 26 جون کو شام 5 بجے اکشے راوت، اشوک عمریکر، راجو بلڈر، گڈو اور چار پانچ دوسرے لوگ آئے اور میں نے جو دو شٹر بند کیے تھے ان کو توڑ کر دوسرا تالا لگا دیا۔ وہ سب چار پانچ گھنٹے شٹر کے سامنے بیٹھے اور پھر چلے گئے۔ اس شکایت کی بنیاد پر شیواجی نگر پولیس نے تعزیرات ہند کی دفعہ 384، 385، 386، 143، 147، 447، 506 اور 511 کے تحت مقدمہ نمبر 246/2022 درج کیا۔اس معاملے کی تفتیش شیواجی نگر کے پی آئی نتن کاشیکر کے پاس تھا۔

اس کیس کو بعد میں اکنامک کرائمز برانچ کے انسپکٹر مانک بیندرے کی رہنمائی میں ناندیڑ ڈسٹرکٹ اکنامک کرائمز برانچ کے حوالے کر دیا گیا، کیس اسسٹنٹ انسپکٹر ہنمنت مٹکے کو سونپا گیا۔ آج 5 جولائی کو ہنمنت مٹکے اور ان کے ساتھی پولیس افسران نے اکشے بھانو سنگھ راوت کو عدالت میں پیش کیا۔ سرکاری وکیل محمد رضی الدین نے کیس ملوث دیگر ملزمین کی گرفتاری اور پوچھ گچھ کے بارے میں بحث کی اور ملزم کی پولس کسٹڈی کامطالبہ کیا ۔ ملزم اکشے راوت کو 7 جولائی 2022 تک دو دن کے لیے پولیس کی تحویل میں دے دیا ہے۔ اکنامک کرائم برانچ دیگر ملزمان کی تلاش کر رہی ہے۔