ناندیڑ:بجلی کی آنکھ مچولی سے شہریان سے عاجز‘دیگلورناکہ کاعلاقہ سب سے زیادہ متاثر‘کوئی پُرسان حال نہیں

176

ناندیڑ:27اگست(ورق تازہ نیوز) شہر ناندیڑ میں عوام بیشتر بنیادی سہولیات سے آج بھی محروم ہیں ۔ جس میں سے اہم مسئلہ بجلی سپلائی کا ہے۔ ان دنوں شہر کے بیشتر علاقوں میں بجلی کی آنکھ مچولی جاری ہے جس سے شہریان بہت عاجز آچکے ہیں مگرا س سنگین مسئلہ کی طرف کوئی توجہ دینے کےلئے تیار نہیں ہے اورکوئی بھی سیاسی جماعت کا لیڈراس جانب محکمہ بجلی سے باز پرس نہیں کررہا ہے۔

موسم برسات جاری ہے لیکن گزشتہ دو ہفتوں سے بارش کے منہ پھیر لینے سے اچانک گرمی کی شدت میں اضافہ ہوگیا ہے جس سے ہر شہری پریشان ہے ۔موسم گرما کی طرح دن اور رات میں شدت کی گرمی محسوس ہورہی ہے ۔ایسے میں بجلی کی آنکھ مچولی زخم پر نمک چھڑکنے کا کام کررہی ہے ۔شہر کے سبھی علاقوں میں صبح سے لے کر شام تک کئی کئی گھنٹوں تک بجلی گُل ہورہی ہے ۔گرما کے موسم سے زیادہ اب برسات کے موسم میں سب سے زیادہ بجلی کی سپلائی منقطع ہورہی ہے ۔ سب سے زیادہ دیگلورناکہ کاعلاقہ یہ مصیبت چھیل رہا ہے ۔جہاں پر پہلے سے ہی بجلی کی سپلائی کامسئلہ ہے مگر ا ب تو دن میں چند گھنٹے ہی لائٹ کی سپلائی جاری رہتی ہے باقی گھنٹے بجلی گُل رہتی ہے ۔

دیگلورناکہ سے متصل بستیوں میںآج آبادی لاکھوں تک پہنچ گئی ہے ۔مگر بیشتر علاقوں میں عوام بنیادی سہولیات سے محروم ہیں اسکے باوجود وہ اپنی زندگی بسر کررہے ہیں ایسے میں بجلی محکمہ کی لاپرواہی سے عوام کو مزید دقتوں کاسامنا کرنا پڑرہا ہے۔مقامی لوگوں کاکہنا ہے کہ آبادی میں دن بدن اضافہ ہورہا ہے لیکن محکمہ بجلی کے کم گنجائش والے ٹرانسفارمربجلی استعمال کا زیادہ بوجھ نہیں

اٹھاپارہے ہیں اس وجہہ سے ان علاقوں میں دن میں پانچ تا آٹھ باربجلی سپلائی گُل رہتی ہے ۔اس ضمن میں سیاسی پارٹیوں کے لیڈران نے سابق میں وعدے بھی کئے تھے کہ یہاں پربجلی کا علیحدہ سب اسٹیشن قائم کیاجائے گا لیکن آج تک اس جانب کوئی پیش رفت نہیں ہوئی ۔عوام کا مطاالبہ ہے کہ روزانہ کی بجلی بند کی مصیبت سے انھیں نجات دلوانے کیلئے زیادہ گنجائش والے برقی ٹرانسفارمر نصب کئے جائیں۔