ناندیڑ:آن لائن دھوکہ دہی کے شکار آدمی کو پولیس نے 7 لاکھ 4 ہزار روپئے واپس دلوائے

254

ناندیڑ:7؍اگست ( نامہ نگار) بجلی تقسیم کمپنی کے بل بھرنے کے نام پر کئی مرتبہ دھوکہ دہی کے واقعات پیش آچکے ہیں۔ عوام کو اس طرح کے فریب دہی پر مبنی فون کال سے ہوشیار رہنے کی اپیل پولیس سپرنٹنڈنٹ پرمود شیوالے نے کی ہے۔ اس طرح کا ایک معاملہ پیش آیا، جس میں 8 لاکھ 64 ہزار 611 روپئے آن لائن دھوکہ دہی کے ذریعے اکائونٹ سے نکال لیے۔ تاہم ناندیڑ کی سائبر پولیس سیل نے شاندار کام کرتے ہوئے ان میں سے 7 لاکھ 4 ہزار 611 روپئے واپس دلوائے ہیں۔ جس پر ناندیڑ ضلع پولیس عملہ کی ستائش کی جارہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق جولائی 2022ء میں بجلی تقسیم کمپنی کے بل بھرنے کے بارے میں نقلی پیغام روانہ کرتے ہوئے چار مختلف افراد کے پاس سے بذریعہ آن لائن 8 لاکھ 64 ہزار 611 روپئے کی دھوکہ دہی کی گئی۔ اس اطلاع پر سائبر پولیس اسٹیشن کے پولیس انسپکٹر نانا صاحب اُبالے، پولیس سب انسپکٹر تھوروے، دلوی، پولیس آفیسر راٹھوڑ، شیوالے، سوامی نے تفصیلی معلومات لے کر فوری طور پر متعلقہ بینک، یو پی آئی، والیٹ، مرچنٹ کو ای میل روانہ کرتے ہوئے فریب دہی سے متعلق آگاہ کیا۔ جس پر دھوکہ دہی کی رقم فریج کردی گئی۔ ان میں سے 7 لاکھ 4 ہزار 611 روپئے واپس دلوانے میں سائبر پولیس نے کامیابی حاصل کی۔

جس پر پولیس سپرنٹنڈنٹ پرمود شیوالے نے سائبر ٹیم کی ستائش کی ہے۔ اس واردات کے بعد پولیس نے عوام سے اپیل کی ہے کہ آن لائن دھوکہ دہی ہونے پر سائبر کرائم سیل کے ہیلپ لائن نمبر 1930 پر ربط کریں اور متعلقہ پولیس اسٹیشن، سائبر پولیس اسٹیشن کو دھوکہ دہی کی اطلاع دیں۔ علاوہ ازیں پولیس سپرنٹنڈنٹ پرمود شیوالے نے عوام سے اپیل کی ہے کہ کسی بھی اجنبی شخص کے فون کال پر اپنے بینک اکائونٹ کی جانکاری نہ دیں اور کسی بھی قسم کا او ٹی پی نہ بتائیں۔ نامعلوم شخص کی جانب سے بھیجے گئے لنک پر کلک نہ کریں اور آن لائن کسٹمر کیئر کے نمبر پر ویب سائٹ کی تصدیق کے بعد ہی کسی قسم کا لین دین کریں۔