• 425
    Shares

میرٹھ:اتر پردیش کے ضلع میرٹھ میں سادھو کے قتل کا اندوہناک معاملہ سامنے آیا ہے، جس سے لوگوں میں غم و غصے کی لہر دوڑ گئی ہے۔ واقعہ منڈالی تھانہ علاقہ کے بڈلا کیتھواڈا گاؤں کا ہے جہاں ایک سادھو کا پیٹ پیٹ کر کچھ نامعلوم لوگوں نے قتل کر دیا اور جب اس کی خبر مقامی لوگوں کو ہوئی تو ایک ہنگامہ برپا ہو گیا۔ موقع پر پہنچی پولیس کو بھی لوگوں کی ناراضگی کا سامنا کرنا پڑا۔ سادھو کے قتل سے ناراض گاؤں والوں نے لاش کو پولیس کے حوالے کرنے سے انکار کر دیا اور ہنگامہ کرتے ہوئے قصورواروں کی جلد گرفتاری کا مطالبہ کیا.

میڈیا ذرائع سے موصول ہو رہی خبروں کے مطابق مہلوک سادھو کا نام چندرپال عرف سکھی ہے جن کی لاش منگل کی صبح برآمد کی گئی۔ موقع پر اکٹھا ہوئے لوگوں نے لاش کو سڑک پر رکھ کر پولیس انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ جلد از جلد قتل واقعہ سے پردہ اٹھایا جائے اور ذمہ داروں کو سزا دی جائے۔ مقامی لوگوں نے الزام عائد کیا ہے کہ علاقے کے ہی کچھ لوگوں نے ان کے ساتھ مار پیٹ کی جس سے ان کی موت واقع ہو گئی۔ امکان ظاہر کیا جا رہا ہے کہ نامعلوم افراد نے پیٹ پیٹ کر سادھو کا قتل کیا اور پھر ان کی لاش کو سڑک پر پھینک دیا۔

سادھو کے متعلق لوگوں کا کہنا ہے کہ بڈلا گاؤں کے سدھ پیٹ چامنڈا دیوی مندر کے پاس وہ رہتے تھے اور گزشتہ 12 سال سے مندر میں ہی عبادت و ریاضت میں مصروف رہتے تھے۔ مقامی لوگوں کے ساتھ چندرپال سادھو کے جھگڑے کی بات سامنے آ رہی ہے، حالانکہ پولیس ابھی اس معاملے پر کچھ بھی کہنے سے پرہیز کر رہی ہے۔ پولیس نے قتل واقعہ کی جانچ شروع کر دی ہے اور لوگوں کو کسی طرح سمجھا کر لاش کو اپنے قبضے میں کر لیا ہے۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق لاش کو پوسٹ مارٹم کے لیے بھیجا جا چکا ہے اور اس کی رپورٹ کا انتظار کیا جا رہا ہے۔ پولیس افسران کا کہنا ہے کہ قتل کی وجہ کا پتہ لگایا جا رہا ہے اور جلد ہی سچائی سامنے آ جائے گی۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔