بیگوسرائے، 31 مئی (یو این آئی) بہار کے بیگوسرائے میں چیک باؤنس ہونے کے معاملے میں نیو گلوبل پروڈیوسر انڈیا لمیٹڈ کے چیئرمین اور ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان مہندر سنگھ دھونی سمیت آٹھ لوگوں کے خلاف جوڈیشل مجسٹریٹ کی عدالت میں شکایت درج کرائی گئی ہے۔چیف جوڈیشل مجسٹریٹ رومپا کماری کی عدالت میں نیرج کمار نرالا نے نیو گلوبل پروڈکشن انڈیا لمیٹڈ، نئی دہلی کے چیئرمین مہندر سنگھ دھونی، چیف ایگزیکٹو آفیسر راجیش آریہ، ڈائریکٹر (اکاؤنٹ ایڈمنسٹریشن) مہندر سنگھ، مارکیٹنگ ہیڈ ارپت دوبے، اے ڈی عمران بن ظفر، مارکیٹنگ مینیجر وندنا آنند اور بہار کے مارکیٹنگ اسٹیٹ ہیڈ اجے کمار کے خلاف تعزیرات ہند کی دفعہ 406، 120 (بی) اور این آئی ایکٹ کی دفعہ 138 کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

پیر کو معاملے کی سماعت کے بعد عدالت نے اسے مقدمے کی سماعت کے لیے جوڈیشل مجسٹریٹ اجے کمار مشرا کی عدالت میں بھیج دیا۔ اس معاملے کی اگلی سماعت کے لیے 28 جون 2022 کی تاریخ مقرر کی گئی ہے۔الزام کے مطابق سال 2021 میں شکایت کنندہ نیرج کمار نیرالا نے نیو گلوبل پروڈیوسر انڈیا لمیٹڈ کا سی این ایف لیا۔ اس نے سی این ایف لینے کے لیے کمپنی کو 36 لاکھ 86 ہزار روپے دیے۔ کمپنی نے شکایت کنندہ کو کھاد بھیجی لیکن کمپنی کے عدم تعاون کی وجہ سے کھاد کی فروخت میں دشواری پیش آئی۔ اس حوالے سے شکایت کنندہ اور کمپنی کے درمیان جھگڑے کی وجہ سے کمپنی نے 30 لاکھ روپے کا چیک دے کر تمام کھادیں واپس لے لیں۔کمپنی کی طرف سے دیا گیا چیک جمع ہونے پر باؤنس ہو گیا۔ چیک باؤنس ہونے پر متعلقہ حکام کو نوٹس بھیجا گیا تاہم کوئی نتیجہ نہ نکلنے پر تمام ملزمان اور کمپنی کے خلاف عدالت میں مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔